معروف قانون دان عاصمہ جہانگیر کو آہوں اور سسکیوں کے ساتھ سپرد خاک کردیا گیا

13 فروری 2018 (19:36)
معروف قانون دان عاصمہ جہانگیر کو آہوں اور سسکیوں کے ساتھ سپرد خاک کردیا گیا

بچھڑا کچھ اس ادا سے کہ رت ہی بدل گئی،،، اک شخص سارے شہرکو ویران کرگیا،،، معروف قانون دان عاصمہ جہانگیر کی میت بڑے قافلے کی صورت میں ان کی رہائش گاہ سے قذافی سٹیڈیم لائی گئی،،، جہاں سیاسی، سماجی اور وکلاء رہنماؤں سمیت شہریوں کی بڑی تعداد موجود تھی،،، عاصمہ جہانگیر کی نمازہ جنازہ حیدر فاروق مودودی نے پڑھائی، چیف جسٹس لاہورہائیکورٹ جسٹس یاورعلی، جسٹس انوارالحق، جسٹس شہرام سرورچودھری، جسٹس صداقت علی خان،جسٹس فیصل زمان نے شرکت کی، سینیٹر پرویزرشید،اعتزازاحسن،چیئرمین سینیٹ رضاربانی ، اٹارنی جنرل اشتراوصاف نے بھی نماز جنازہ میں شرکت کی،،، اس موقع پر رقعت آمیز مناظر دیکھنے کو ملے ساتھی وکلا گلے مل کر روتے رہے،،، عاصمہ جہانگیر کی وصیت کے مطابق تدفین لاہور کے علاقے بیدیاں روڈ پر واقع ان کے فارم ہاؤس میں کی گئی، بے زبانوں، بےسہاروں اور ظالموں کے ستائے ہوئے مظلوموں کی آواز بننے والی عاصمہ جہانگیر کو 11 فروری کو ہائی بلڈپریشر کے باعث برین ہیمرج ہوا جس کے بعد وہ دنیائے فانی سے کوچ کر گئیں۔ مرحومہ کی صاحبزادی بیرون ملک میں موجود تھیں، جس کی وجہ سے نماز جنازہ میں تاخیر کی گئی



زینب قتل کیس کا فیصلہ

لاہور کی کوٹ لکھپت جیل میں جج سجاد احمد نےزینب قتل کیس کا فیصلہ سنادیا۔ عدالت ...