چترال کی بہادر گھریلو خواتین ان ٹماٹروں کو بیچ کر بچوں کو تعلیم دلاتی ہیں اور گھر بار چلاتی ہیں

  چترال کی بہادر گھریلو خواتین ان ٹماٹروں کو بیچ کر بچوں کو تعلیم دلاتی ہیں اور گھر بار چلاتی ہیں

چترال کی خوبصورت وادی کریم آباد کے درونیل گاؤں میں کاشتکار غیر موسمی ٹماٹر کاشت کرتے ہیں جو بیس اگست سے لیکر دسمبر کے احتتام تک فصل دیتا ہے،، اس علاقے کے لوگوں کا کہنا ہے کہ جب پورے ملک میں ٹماٹر کی قلت پیدا ہوئی تو ٹماٹر کو کراچی تک پہنچایا،، تاہم ان کو ایک شکایت ضرور ہے کہ وہ آٹھ کلومیٹر دور سے ان کھیتوں کیلئے پانی لانے کیلئے ندی خود بناتے ہیں،، ان کو شکایت ہے کہ اس پوری وادی میں حکومت نام کی کوئی چیز نہیں ہے،، یہاں محکمہ آبپاشی کی کوئی نہر نہیں،، سڑکوں کی حالت اتنی خراب ہے کہ گاڑی میں ٹماٹر لے جاتے وقت توازن برقرار رکھنے کیلئے گاڑی کے ایک کنارے پر لٹکنا پڑتا ہے،ان کا مزید کہنا تھا کہ ہماری زمین نہایت زرخیز ہے مگر پانی کی قلت کی وجہ سے ہم صرف بیس فیصد زمین کاشت کرتے ہیں اسی فی صد زمین بنجر پڑی رہتی ہے، انہوں نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ان کیلئے پانی کا بندوبست کیا جائے ،،

Most Popular