جماعت اسلامی،سنی اتحاد کونسل،جمعیت علمائے پاکستان اورمہاجر قومی موومنٹ نےبڑے پیمانے پر دھاندلی کی شکایات پرکراچی میں الیکشن کا بائیکاٹ کردیا.

جماعت اسلامی،سنی اتحاد کونسل،جمعیت علمائے پاکستان اورمہاجر قومی موومنٹ نےبڑے پیمانے پر دھاندلی کی شکایات پرکراچی میں الیکشن کا بائیکاٹ کردیا.

کراچی میں پولنگ اسٹیشنزپر قبضے،عملے کو یرغمال بنانے، دھونس دھاندلی کی خبریں گرم ہیں،جب کہ ان شکایات پرجماعت اسلامی کے تمام امیدواروں نے شہر کے تمام حلقوں میں الیکشن کا بائیکاٹ کردیا ہے،جب کہ جماعت اسلامی کے امیر منورحسن نے تیرہ مئی کو ہڑتال کا بھی اعلان کیا مسلم لیگ نےبھی کراچی میں انتخابی عمل میں بدامنی اوردھاندلی کےالزامات لگاتے ہوئے نتائج کو تسلیم کرنے سے انکار کردیا ہے،جب کہ تحریک انصاف نے بھی شہر قائد میں انتخابی عمل پر تشویش کا اظہارکیا،پی ٹی آئی کے امیدوار عارف علوی نے الزام عائد کیا کہ ایم کیو ایم نے ان کےکارکنوں پر تشدد کیا،اورمطالبے کے باوجود پولنگ اسٹیشنز پرفوج تعینات نہیں کی گئی،تحریک انصاف کے امیدوار نے رات بارہ بجے تک پولنگ کا وقت بڑھانے کا بھی مطالبہ کیا، مہاجر قومی موومنٹ نے بھی پولنگ اسٹیشنز پر قبضے اور دھاندلی کی الزامات لگاتے ہوئے انتخابی عمل کا بائیکاٹ کردیا ہے،سنی اتحاد کونسل اور جمعیت علمائے پاکستان نے بھی تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کراچی میں الیکشن سے علیحدگی اختیارکرلی ہے،

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular