سورج کا پارا چڑھتے ہی سیاحتی مقامات ویران

سورج کا پارا چڑھتے ہی سیاحتی مقامات ویران

سورج سوا نیزے پر پہنچا تو چھٹی کے روز ہر کوئی گھروں میں رہنے کو ترجیح دینے لگا ،، ماہ صیام میں شدید گرمی کے باعث سیاحتی مقامات ویران پڑنے لگے ،، کلر کہا کا حال بھی کچھ ایسا ہے ،، جہاں لوگ اس سیاحتی مقام کا رخ کرنے کی بجائے چشموں میں ڈبکیاں لگا کر محظوظ ہونے کو ترجیح دے رہے ہیں ،، ان کا کہنا ہے کہ شدید گرمی نے ہر کسی کو نڈھال کر رکھا ہے،، سیاحتی مقام کا حسن مور بھی ۔۔۔ درختوں کے چھاؤں میں چھپا بیٹھا ہے ،، جبکہ مزار پر بھی زائرین کی تعداد انتہائی کم ہے،، مقامی افراد کے مطابق ہر سال گرمیوں میں لوگوں کا رش انتہائی کم ہو جاتا ہے جس کی وجہ سے انہیں مالی مشکلات درپیش ہیں ،، جبکہ حکومت ایسے سیاحتی مقامات کیلئے کوئی خاطر خواہ اقدامات نہیں کرتی ،

Most Popular