اردو کے معروف مزاح نگار،شاعر اور ادیب ابن انشا کی40 برسی آج منائی جارہی ہے

اردو کے معروف مزاح نگار،شاعر اور ادیب ابن انشا کی40 برسی  آج منائی جارہی ہے

انشا کا اصل نام شیر محمد خان تھا انہوں نے تعلیم مکمل کرنے کے بعد انشا ریڈیو پاکستان سے منسلک ہو ئے،،وزارت ثقافت اور دیگر اداروں میں ملازمت سے دل نہ بھرا تو انشا نے اقوام متحدہ میں بھی خدمات سر انجام دیں ،اقوام متحدہ میں ڈیوٹی کے دوران ان کو مختلف ممالک کے دورے کرنے اور انکی تہزیب کو نزدیک سے دیکھنے کا موقع بھی ملا ،،انشا نے سنٹرل ایشیا کے علاوہ چین ،بھارت اور ایران میں بھی کچھ وقت گزارا،،جس کا اظہار اپنےسفر ناموں میں کیا ،،انشا کو حقیقی شہرت انکی غزل انشا جی اٹھو اب کوچ کرو سے ملیانشا نے اگرچہ شاعری بھی کی اور نثر نگاری بھی لیکن ان کو اصل عزت اور احترام ایک مزاح نگار کے طور پر حاصل ہوا ،،انکے مزاح ناموں میں ،،خمار گندم بے حد مقبول ہوا ،،آپ سے کیا پردہ،اردو کی آخری کتاب اور خط انشا جی کے بھی ،،،انکے مزاح ناموں میں شامل ہیں،،انکی دیگر مشہور تصانیف میں ،،،چلتے ہو تو چین کو چلیے،ابن بطوطہ کے تعاقب میں،دنیا گول ہے ،آوارہ گرد کی ڈائری اور نگری نگری پھرا مسافر شامل ہیں،،انشا نے شاعری بھی کی اور چاند نگری انکا معروف مجموعہ کلام ہے،وہ 11 جنوری 1978 کو لندن میں انتقال کر گئے،

Most Popular