اداکار لہری کی پانچ ویں برسی آج منائی جارہی ہے

 اداکار لہری کی پانچ ویں برسی  آج منائی جارہی ہے

معروف اداکارلہری کا اصل نام سفیراللہ صدیقی تھا۔ لہری برصغیر کی فلمی دنیا اپنی طرز کے منفرد اداکار تھے۔ ان کے مزاح کی خاص بات ان کے برجستہ جملے ہوتے تھے ۔ لہرہ نے انیس سو چھپن میں فلم انوکھی سے فلمی کیرئر کا آغاز کیا۔ لہری نے پینتیس سال فلمی دنیا کے نام کئے۔ ان کی مہارت وہ انداز ڈیلوری تھا جوکسی بھی اسکرپٹ کا محتاج نہیں تھا۔ مکالموں میں برجستگی، شائستگی، اتار چڑھاﺅ، تاثرات، حرکات و سکنات۔سب فنوں میں وہ یکتا تھے۔ لہری تقریباً ایک سو پچاس فلموں کے مرکزی کرداروں میں شامل رہے۔ انیس سو چھیاسی ان کے فلمی سفر کا آخری سال تھا۔ اس برس ان کی آخری فلم ‘دھنک’ ریلیز ہوئی مگر یہ کامیابی حاصل نہ کرسکی، انہیں پاکستان میں مزاحیہ اداکار کے سب سے زیادہ نگار ایوارڈز لینے کا اعزاز بھی حاصل ہے۔ مسلسل بیمار رہنے کے باعث انہیں فلمی دنیا سے رشتہ توڑ کر لاہور سے کراچی منتقل ہونا پڑا ،فلمی دنیا سے چھبیس برس تک دور رہنے کے بعد وہ تیرہ ستمبر دوہزار بارہ کو خالق حقیقی سے جا ملے۔

Most Popular