الطاف حسین کی تقریرکیخلاف بلوچستان اسمبلی میں مذمتی قرارداد متفقہ طورپر منظور

الطاف حسین کی تقریرکیخلاف بلوچستان اسمبلی میں مذمتی قرارداد متفقہ طورپر منظور

متحدہ کےقائد الطاف حسین کی فوج سےمتعلق تقریرکےخلاف بلوچستان اسمبلی میں صوبائی وزیرداخلہ میرسرفرازبگٹی نے قرارداد پیش کی، قرارداد میں کہا گیاکہ پاک فوج محب وطن اورملکی سرحدوں کی حفاظت کررہی ہے۔لسانی تنظیم کی جانب سےافواج پاکستان کے خلاف ہرزہ سرائی بغاوت کے زمرےمیں آتی ہے،ایم کیوایم نےپورے کراچی کویرغمال بنایاہواہے۔ الطاف حسین کا بیان آرٹیکل چھ کے زمرے میں آتا ہے،الطاف حسین کےبیان پر سخت کارروائی کی جائے،ایم کیوایم پرپابندی عائد کی جائے، الطاف حسین کا بیان فوج کے حوصلے پست کرنے کے برابر ہے۔اس سے پہلے جب میر سرفرازبگٹی نے الطاف حسین کےخلاف قرار داد پیش کرنے کااعلان کیا تو دیگر اراکین اسمبلی نےبھی الطاف حسین کے بیان کی شدید مذمت کی، جے یوآئی ف سےتعلق رکھنے والی رکن اسمبلی شاہدہ رؤف نےکہاکہ الطاف حسین نے مسلح افواج سےمتعلق غلط بات کہی،پاک فوج اس کے خلاف قانونی کارروائی کرے،صوبائی وزيرصحت رحمت بلوچ نے کہاکہ الطاف حسین کا پاک فوج سےمتعلق بیان قابل مذمت ہے ،پیش کردہ قرارداد میں ترامیم بھی تجویزکی گئيں ۔ان ترمیم کےبعد قرارداد متفقہ طورپر منظورکرلی گئی۔

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular