ارسلان افتخار کیس دو افراد کے درمیان معاملہ ہے جو نیب کے دائرہ کار میں نہیں آتا معاملے سے قومی خزانے پر کوئی اثر نہیں پڑا، نیب کارروائی نہیں کر سکتا۔ چئیرمین نیب فصیح بخاری

ارسلان افتخار کیس دو افراد کے درمیان معاملہ ہے جو نیب کے دائرہ کار میں نہیں آتا معاملے سے قومی خزانے پر کوئی اثر نہیں پڑا، نیب کارروائی نہیں کر سکتا۔ چئیرمین نیب فصیح بخاری

چیئرمین نیب کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ نیب کسی بھی شکایت کی صورت میں قانون کے مطابق ایکشن لیتا ہے جبکہ ارسلان اورملک ریاض کا معاملہ نیب کے دائرہ کارمیں نہیں آتا، اس سے پہلے نیب کے ترجمان ظفر اقبال نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ شریف برادران کے خلاف رحمان ملک کی جانب سے بھجوائے گئے ریفرنس کی نیب کی خصوصی ٹیم تحقیقات کر رہی ہے ،نیب نے ڈی ایچ اے لینڈ سکینڈل کا بھی نوٹس لیا ہے اور بغیر کسی دباو کے نیب آرڈیننس کے تحت کاروائی کی جا رہی ہے۔ایک سوال پر ترجمان کا کہنا تھا کہ اس وقت نیب ہیڈ کوارٹر کے پاس بحریہ ٹاون کا کوئی کیس نہیں ہے تاہم نیب راولپنڈی کا ریکارڈ دیکھ کر ہی بتایا جا سکتا ہے کہ ان کے پاس بحریہ ٹاون کے کتنے کیسز ہیں لیکن چیئرمین فصیح بخاری کی تعیناتی کے دوران بحریہ ٹاون کا کوئی کیس بند نہیں کیا گیا۔

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular