جن سیاسی جماعتوں کے دہشتگرد گروپ ہیں انہیں آئندہ انتخابات میں حصہ لینےکی جازت نہیں ہونی چاہیئے۔ نوازشریف

 جن سیاسی جماعتوں کے دہشتگرد گروپ ہیں انہیں آئندہ انتخابات میں حصہ لینےکی جازت نہیں ہونی چاہیئے۔ نوازشریف

کراچی کےنجی ہوٹل میں میاں نوازشریف نےتاجروں صنعت کاروں اور بینکرز سے ملاقات کی۔ ملاقات کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئےانہوں نے کہا کہ دوہزار آٹھ میں الیکشن ہوئے تو لگا کہ سب ملکر کام کریں گے اور چارٹر آف ڈیموکریسی پر عمل ہوگا تاہم ایسا نہیں ہوا۔ کراچی میں سیاسی جماعتوں کے دہشت گرد گروپ سرگرم ہیں جن پر آئندہ انتخابات میں حصہ لینے پر پابندی ہونی چاہیے۔ نوازشریف نےکہا کہ کراچی میں رینجرز کو اختیارات ملنے چاہیئں تاکہ امن وامان میں بہتری آئے۔ حکومت سیلاب سے بچاؤ کے لیے ڈیڑھ ماہ پہلے اقدامات کرلیتی تو آج اتنی تباہی نہ ہوتی۔ حکومت کو صحیح سمت لانے کے لیے سب کو کردار اداکرنا ہوگا۔ مسلم لیگ نون کے قائد کا کہنا تھا کہ معیشت کی بہتری اولین ترجیح جس کے لیے نا صرف پالیسیاں بنائی جائیں گی بلکہ ایسےلوگ لائے جائیں گے جو ان پر دنوں میں عملدرآمد کرائیں۔ انہوں نے نجکاری سے قبل اداروں کی صحت بہتر بنانے کے لیے گورننس کی بہتری پرزور دیا ۔ کراچی کے تاجروں اور صنعت کاروں کی تجاویزکی روشنی میں مل کر معاشی ایجنڈا بنایا جائے گا۔ اس موقع پرنون لیگ کے رہنما خواجہ آصف نے کہا کہ سٹیل ملز کے ساتھ جس نقصان سے بچنے کے لیے سٹیل ملز کی نجکاری روکی گئی آج اس سے کئی گنا نقصان ہوچکا ہے۔ ملاقات میں خواجہ آصف،غوث علی شاہ اور رانا ثناءاللہ سمیت نون لیگ کےدیگر رہنماؤں نے بھی شرکت کی۔

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular