لاہورہائیکورٹ نے بھارتی جاسوس اور پاکستان میں بم دھماکوں کے ملزم سربجیت سنگھ کی ممکنہ رہائی کیخلاف دائردرخواست نمٹا دی۔

لاہورہائیکورٹ نے بھارتی جاسوس اور پاکستان میں بم دھماکوں کے ملزم سربجیت سنگھ کی ممکنہ رہائی کیخلاف دائردرخواست نمٹا دی۔

چیف جسٹس لاہورہائیکورٹ جسٹس اعجازاحمد چودھری نے کیس کی سماعت کی۔ درخواست گزار غازی علم دین نے مؤقف اختیار کیا تھا کہ سربجیت سنگھ پاکستان میں ہونے والے کئی بم دھماکوں میں ملوث ہے اور سزائے موت کا مجرم ہے مگربھارت سے بہترین تعلقات کے خواہشمند حکمران اس کی سزا معاف کرنا چاہتے ہیں جو غیر آئینی اور غیر قانونی اقدام ہے ۔ جس پر عدالت نے وفاقی حکومت سے جواب طلب کر رکھا تھا ۔ آج وفاقی حکومت کی جانب سے عدالت میں جواب جمع کراتے ہوئے ڈپٹی اٹارنی جنرل کا کہنا تھا کہ سربجیت سنگھ کی سزا معاف کرنے کے حوالے سے کوئی درخواست صدر پاکستان کے پاس زیر غور نہیں ہے ۔ وفاقی حکومت کے جواب کے بعد چیف جسٹس لاہورہائیکورٹ نے سربجیت سنگھ کی ممکنہ رہائی کے خلاف دائر درخواست نمٹا دی۔

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular