دنیا بھر میں آج ٹیلی وژن کا عالمی دن منایا جارہاہے کیا ٹی وی سماجی ترقی میں اپنی ذمہ داریاں اور فعال کردار ادا کر رہا ہے کہ نہیں اس بات کا ادراک کرنے کی ضرورت شدت سے محسوس کی جارہی ہے

دنیا بھر میں آج  ٹیلی وژن کا عالمی دن منایا جارہاہے  کیا ٹی وی  سماجی ترقی میں اپنی ذمہ داریاں اور فعال کردار ادا کر رہا ہے کہ نہیں اس بات کا ادراک کرنے کی ضرورت شدت سے محسوس کی جارہی ہے

ٹیلی ویژن نے عوام کو خبروں سے باخبر رکھنے میں تو برق رفتاری کا مظاہرہ کیا ہے تو دوسری جانب سیاست سے بھی خوب روشناس کرایا۔ عوامی ایشوز کی لائیو کوریج سے لے کر فالو اپ تک بھرپور نظر آتا ہے جبکہ نوجوانوں کے ٹیلنٹ اور صلاحیتوں کو پروان چڑھانے میں بھی کافی مدد ملیملک میں پہلا چینل پی ٹی وی تھا جو انیس چونسٹھ میں شروع ہوا مگر پچھلے چودہ برس کے دوران ٹی وی انڈسٹری نے بہت ترقی کی ہےاوردو کروڑ کے قریب گھرانوں ٹی وی دیکھا جانے لگا ہے ، ایک اندازے کے مطابق ملک میں سوسے زائد چینلز دکھائے جا رہے ہیں، جن میں نیوز، ڈرامہ، سپورٹس،میوزک، فیشن،کوکنگ اور مذہبی موضوعات سے متعلق چینل شامل ہیں جبکہ دس ہزار سے زائد ایسے چینل بھی ہیں جو آپریٹرز مقامی سطح پر چلارہے ہیں..بات یہاں کتم نہیں ہوتی بلکہ اب بھارت، ترکی، ایران اور سپین کے ساتھ ساتھ عرب ملکوں کا مواد بھی دیکھنے میں آ رہا ہےمبصرین کے مطابق ٹی وی میڈیا کی ترقی کے ساتھ ساتھ سنسنی خیزی کو بھی فروغ ملا ، اشتہارات خبری مواد پر حاوی ہو گئے اور ٹی وی نشریا ت کے حوالے سے اہم فیصلے عوامی مفاد کی بجائے ریٹنگ اور اشتہارات کی بنیاد پر ہونے لگے۔ ایک اندازے کے مطابق الیکٹرانک میڈیا کو ہر سال پچیس ارب کے اشتہارات ملتے ہیں ،تھری جی اور فور جی ٹیکنالوجی کی آمد کے بعد امکان ہے کہ موبائل فون ٹی وی کی جگہ لے لے گا اورٹی وی نشریات پیش کرنے کے انداز میں بھی بدلے گا، تیلی ویذن کے عالمی دن پر ایک بار پھر اس عزم کا اظہار کیا جا رہا ہے کہ ٹی وی چیلنز کوسماجی ترقی ،ثقافٹ کے فروغ اور تفریح کے ساتھ ساتھ عوام میں اپنی ساکھ کا بھی خیال رکھنا ہو گا

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular