لاس ویگاس میں میوزک کانسرٹ کے دوران قیامت ٹوٹ پڑی۔

لاس ویگاس میں میوزک کانسرٹ کے دوران قیامت ٹوٹ پڑی۔

امریکہ کی تاریخ کا خونی واقعہ جو کبھی فراموش نہ ہو سکےگا، امریکی شہرلاس ویگاس میں میوزک کانسرٹ کے دوران قیامت ٹوٹ پڑی، اندھا دھند فائرنگ کے نتیجے میں درجنوں افراد ہلاک جبکہ سینکڑوں زخمی ہو گئے، فائرنگ عمارت کی بتسویں منزل سے 64 سالہ اسٹیفن پیڈک نے کی، جو ارب پتی انسان اور سابق اکاونٹنٹ تھا، پولیس کے مطابق وہ ستر ہزار ڈالر کا جوا ہار کر آیا تھا، پیڈک کا باپ بھی ایف آئی او کو مطلوب تھا، حملے کے بعد بھی امریکی شہری پیڈک کے کمرے سے بھاری اسلحہ برآمد ہوا، جس کا لائسنس بھی اسکے پاس موجود تھا، تاہم واقعے کی مکمل تفتیش ابھی جاری ہے، ادھرامریکی صدر ٹرمپ اور دیگر رہنماوں نے واقعے کو شیطانی عمل قرار دیتے ہوئے اس پر شدید مذمت کی اور بولا کہ ایف بی آئی پولیس کے ساتھ مل کر واقعے کی باقاعدہ تفتیش کرے گی

Most Popular