مقبوضہ فلسطین کی دو سخت حریفوں کے درمیان دس سالوں کے بعد صلح ہوگئی

مقبوضہ فلسطین کی دو سخت حریفوں کے درمیان دس سالوں کے بعد صلح ہوگئی

مصر کے دارالحکومت قاہرہ میں فلسطین کی دو سخت حریف جماعتوں کے مابین ایک دہائی سے جاری تنازعہ حل ہوگیا،، مصالحتی معاہدے پر الفتح کی جانب سے اعظم الاحمد اور حماس کے صالح الروری نے دستخط کیے،معاہدے کے مطابق اکیس نومبر کو دونوں گروپوں کی قاہرہ میں دوبارہ ملاقات ہوگی،، جس میں دو ہزار گیارہ کے معاہدے پر عملدرآمد سے متعلق لائحہ عمل طے کیا جائے گا،معاہدے کے تحت غزہ کا انتظامی نظام الفتح سنبھالے گی،، ایک سال کے اندر قومی اور کونسل انتخابات کرائے جائیں گے،، دونوں تنظیمیں آزاد فلسطینی ریاست کے قیام اور مقبوضہ بیت المقدس کو دارالحکومت بنانے کیلئے مشترکہ جدوجہد کریں گی،دونوں تنظیموں کے تعلقات دو ہزار سات سے کشیدہ چلتے آرہے تھے،، جسے ختم کرنے کیلئے مصر نے قاہرہ میں مصالحتی مذاکرات کرانے میں اہم کردار ادا کیا۔

Most Popular