ترکی نے روس سے اسلحہ خریدنے کے پہلے بڑے معاہدے پر دستخط کر دیئے جس کے تحت دفاعی میزائل نظام ایس چار سو حاصل کیا جائے گا

 ترکی نے روس سے اسلحہ خریدنے کے پہلے بڑے معاہدے پر دستخط کر دیئے جس کے تحت دفاعی میزائل نظام ایس چار سو حاصل کیا جائے گا

ترک اخبار کے مطابق ترکی نے بڑے پیمانے پر اسحلہ خریدنے کے لیے روس کے ساتھ اپنے پہلے معاہدے پر دستخط کر لیے ، جس کے تحت دفاعی میزائل نظام ایس چار سو حاصل کیا جائے گا ، روس سے دفاعی میزائل نظام خریدنے کے لیے انقرہ کا غیر نیٹو ملک کے ساتھ معاہدہ انتہائی اہمیت کا حامل ہے، اس معاملے پر روسی صدر پیوٹن پرعزم ہیں، روس اور ترکی کے درمیان ہونے والے اس معاہدے کے بعد مغربی ممالک میں غیرنیٹو ملک سے اسلحہ نہ خریدنے پراتحاد کے توازن پر تشویش میں اضافہ ہوگا، امریکا نے خبردار کرتے ہوئے دوٹوک الفاظ میں کہا ہے کہ نیٹو اتحاد کے لیے 'عام طور پر یہ ایک اچھا منصوبہ ہے' کہ وہ قابل تبادلہ اسلحہ خریدے، جبکہ ادھر اردوگان کا کہنا تھا کہ ترکی اپنے دفاع کو مضبوط بنانے کے لیے عسکری معاہدوں کے لیے آزاد ہے۔

Most Popular