میزائل پروگرام کا ایٹمی معاہدے سے کوئی تعلق نہیں۔ ایران

میزائل پروگرام کا ایٹمی معاہدے سے کوئی تعلق نہیں۔ ایران

ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان بہرام قاسمی نے اٹلی میں منعقدہ جی سیون گروپ کے رکن ممالک کے حالیہ اجلاس کے اختتامی اعلامیہ پر ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ جوہری معاہدے کے مکمل نفاذ کے حوالے سے ایران اپنے وعدوں پر قائم ہے اور ہم توقع رکھتے ہیں کہ مغربی فریق بھی اپنے وعدوں پرعمل درآمد کو یقنی بنائے گا۔ایرانی ٹی وی چینل کے مطابق بہرام قاسمی نے کہا کہ ایران کے بیلسٹک میزائل پروگرام کی ماہیت اور میزائل کی ڈیزائننگ کچھ اس طرح کی گئی ہیں کہ جن سے سلامتی کونسل کی قرار داد بائیس اکتیس کی خلاف ورزی نہیں ہوتی۔ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ ایران نہایت خوش اسلوبی اور جذبہ خیرسگالی کی بنیاد پر جوہری معاہدے کے من و عن نفاذ کا خواہاں ہے اور جیسا کہ جی سیون گروپ کے اختتامی اعلامیہ میں بھی بیان کیا جاچکا ہے کہ چند فریقی معاہدے کے مکمل نفاذ کے لئے ضروری ہے کہ تمام فریق اپنے وعدوں پر بدستور قائم رہیں۔بہرام قاسمی نے کہا کہ مختلف عالمی رپورٹیں بالخصوص بین الاقوامی جوہری توانائی ایجنسی اس بات کی گواہ ہے کہ ایران جوہری معاملے پر اپنے وعدوں پر قائم ہے لہذا دوسرے فریق کو تعمیری سیاسی اقدامات اٹھانے بالخصوص پابندیوں کے خاتمے پر مثبت کارکردگی دکھانے کی ضرورت ہے۔واضح ر ہے کہ گروپ سیون کے اختتامی بیان میں ایران کے میزائل پروگرام پر تشویش کا اظہار کیا گیا تھا۔

Most Popular