سید علی گیلانی ، میرواعظ اور یاسین ملک کو نماز جمعہ ادا کرنے سے روک دیا گیا۔

سید علی گیلانی ، میرواعظ اور یاسین ملک کو نماز جمعہ ادا کرنے سے روک دیا گیا۔

مقبوضہ کشمیر میں کل جماعتی حریت کانفرن کے قائدین سید علی گیلانی ، میرواعظ اور یاسین ملک کو نماز جمعہ ادا کرنے سے روک دیا گیا جبکہ سری نگر کی تاریخی جامع مسجد سیل رہی ، سری نگر سمیت کئی مقامات پر شہریوں نے دفعہ144 کی پابندیوں توڑ کر بھارت کے خلاف مظاہرے کیے۔سید علی گیلانی ، میرواعظ اور شبیر شاہ گھر پر نظر بند جبکہ یاسین ملک سنٹرل جیل سری نگر میں قید ہیں پلوامہ میں اس وقت کہرام مچ گیا جب وہاں احتجاج کرنے والے ایک ہجوم کو منتشر کرنے کے لئے فورسز نے گولی چلائی جس سے ایک نوجوان زخمی ہوگیا اسے ہسپتال لے جایا گیا جہاں اسے طبی امداد فراہم کی جارہی ہے ۔بتایا جاتا ہے کہ فورسز نے اس وقت گولی چلائی جب نوجوان فورسزکی جبر و زیادتیوں کے خلاف احتجا ج کررہے تھے بتایا جاتا ہے کہ انہوں نے پتھراو شروع کیا جس پر فورسز نے پہلے شلنگ کی اور اس کے بعد پیلیٹ چھروں کا استعمال کیا جس سے کئی نوجوان زخمی ہوگئے اس دوران مقامی لوگوں کے مطابق فورسز نے مظاہرین پر گولی بھی چلائی جس سے ایک نوجوان زخمی ہوگیا البتہ پولیس نے ان اطلاعات کو غلط قرار دیا کہ پلوامہ میں کسی جگہ گولی چلائی گئی ۔جنوبی کشمیر کے بعض مقامات پر اپریشن کے دوران تشدد بھڑک اٹھا۔نوجوانوں نے سڑکوں پر آکر فورسز پر پتھراو کیا جنہیں منتشر کرنے کیلئے اشک آور گیس کے گولے داغے گئے ۔ معلوم ہوا ہے کہ لوگوں کی جانب سے فورسز پر پتھراو کے بعد آپریشن کو موخر کیا گیا۔ ادھر کریم آباد پلوامہ میں بھی فوج نے تلاشی لی جس دوران مکینوں سے پوچھ تاچھ کی گئی ۔ ڈاڈ سرہ ترال میں پولیس وفورسز نے گھر گھر تلاشی لی ۔ ذرائع کے مطابق 44آر آر اور ایس او جی اونتی پورہ نے ڈاڈ سرہ ترال گاؤں کو محاصرے میں لے کر گھر گھر تلاشی لی جنوبی کشمیر میں سرگرم عسکریت پسندوں کو مار گرانے کیلئے پولیس ، پیرا ملٹری فورسز اور ایس او جی کو تیاری کی حالت میں رکھا گیا ہے۔ شہر سرینگر کے سات پولیس اسٹیشنوں کے تحت آنے والے علاقوں میں جمعہ کوبھی امتناعی احکامات سختی کے ساتھ نافذ رہے۔ خانیار، نوہٹہ ، رعناواری ، مہاراج گنج ، صفا کدل ، مائسمہ اور کرالہ کھڈ میں دفعہ144 کے تحت شہریوں کی نقل وحرکت روک دی گئی آزادی پسند قائدین سید علی گیلانی ،میر واعظ محمد عمر فاروق اور محمد یاسین ملک نے مقبوضہ کشمیر میں غیر اعلانیہ کرفیو آزادی پسند راہنماوں کو مسلسل اپنے گھروں اور پولیس اسٹیشنوں میں نظربند رکھنے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ یہ ریاستی دہشت گردی اور سرکاری غنڈہ گردی کا بدترین مظاہرہ ہے، جو ریاست میں بدامنی اور اتھل پتھل میں اضافے کا باعث بن رہا ہے اور اس سے حالات دن بدن دھماکہ خیز صورت اختیار کررہے ہیں۔

Most Popular