خواتین کے احتجاج نے فوجیوں کو گاﺅں سے بھاگنے پرمجبور کردیا۔

خواتین کے احتجاج نے فوجیوں کو گاﺅں سے بھاگنے پرمجبور کردیا۔

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے کولگام کے گاﺅں او کے میں محاصرے اور تلاشی کی کارروائی کے دوران مردوں کوگھروں سے باہر نکال کر ایک میدان میںجمع کر کے انہیں شدید مار پیٹ کا نشانہ بنایا۔ کشمیر میڈیا سروس مطابق بھارتی فوجیوں نے صبح چھ بجے کے قریب اوکے گاﺅں کو محاصرے میں لیکر گھر گھر تلاشی شروع کر دی اور اس دوران تمام مردوں کو گھروں سے باہر نکال کر ایک گراﺅنڈ میں اکٹھا کیا گیا۔ دس برس کی عمر سے کم بچوں اور خواتین کو گھروں کے اندر ہی رہنے دیا گیا۔ قابض فوجیوں نے گراﺅنڈ کے اندر موجود مردوں کو وحشیانہ ماپیٹ کا نشانہ بنایا ۔ اس دوران مار پیٹ کی خبر جب گھروں میں موجود خواتین تک پہنچی تو انہوں نے گھرو ں سے باہر آکر زبردست احتجاج شروع کر دیا اور بھارت کے خلاف اور آزادی کے حق میں نعرے لگائے ۔ احتجاجی خواتین نے جب گراﺅنڈ کی طرف پیش قدمی کرنا چاہی تو فوجیوں نے شدید ہوائی فائرنگ کر کے انہیں آگے بڑھنے سے روک دیا۔ تاہم خواتین نے فائرنگ کے باوجود اپنا احتجاج جاری رکھا اور فوجیوں کو گاﺅں سے بھاگنے پر مجبور کیا۔

Most Popular