مصر: عیسائی عبادت گاہ کے قریب فائرنگ میں پولیس اہلکار ہلاک ،3 زخمی

مصر: عیسائی عبادت گاہ کے قریب فائرنگ میں پولیس اہلکار ہلاک ،3 زخمی

مصر کے جزیرہ نما سیناءمیں ایک عیسائی عبادت گاہ کے قریب فائرنگ کے واقعے میں ایک پولیس اہلکار ہلاک اور3 زخمی ہوگئے۔ دوسری جانب شدت پسند تنظیم داعش نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔عرب ذرائع ابلاغ کے مطابق داعش تنظیم نے دعویٰ کیا ہے کہ اس نے مصری پولیس اور گرجا گھر کو نشانہ بنایا ہے۔ تاہم گرجا گھر کی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ فائرنگ کے نتیجے میں کسی قسم کا جانی یا مالی نقصان نہیں ہوا۔ مصری وزارت داخلہ کے حکام نے بتایا کہ مسلح شدت پسندوں نے جزیرہ سینا میں پہاڑی علاقے میں دیر سینٹ کیتھرین کے قریب پولیس کی ایک ٹیم پر حملہ کیا۔ پولیس کی جوابی فائرنگ میں دہشت گرد اسلحہ چھوڑ کر فرار ہوگئے، فائرنگ کے نتیجے میں ایک پولیس اہلکار ہلاک اور تین زخمی ہوگئے۔ زخمیوں کو ہسپتال منتقل کردیا گیا ہے۔واضح رہے کہ ایک ہفتہ قبل مصر کے شہروں سکندریہ اور طنطا میں عیسائی عبادت گاہوں پر ہونے والے خود کش حملوں میں درجنوں افراد ہلاک ہوئے تھے۔

Most Popular