بھارتی وزیراعظم کو لکھنؤ یونیورسٹی کے کانووکیشن میں شرکت مہنگی پڑگئی, طلبا نے مودی مردہ باد کے نعرے لگا دیئے

 بھارتی وزیراعظم کو لکھنؤ یونیورسٹی کے کانووکیشن میں شرکت مہنگی پڑگئی, طلبا نے مودی مردہ باد کے نعرے لگا دیئے

لکھنؤ میں باباصاحب بھمراؤ ایمبیڈکر یونیورسٹی کے سالانہ کونووکیشن کی تقریب میں اس وقت بدمزگی پیدا ہوئی، جب مہمان خصوصی وزیراعظم نریندر مودی کے خطاب کے دوران طلباء نے مودی مردہ باد کے نعرے لگانا شروع کردیئے. یہ طلباء ایک چھبیس سالہ پی ایچ ڈی دلت نوجوان کی خودکشی کے خلاف احتجاج کررہے تھے، جس نے یونیورسٹی سے نکالے جانے پر دلبرداشتہ ہوکر موت کو گلے سے لگا لیا تھا، دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت ہونے کے دعوے دار ملک کے سیکیورٹی اہلکاروں نے وزیراعظم کے خلاف نعرے سنے تو فوری حرکت میں آگئے، اور احتجاجی طلباء کو دھکے دے دے کر ہال سے نکال دیا، جس کے بعد مودی جی نے بنا کسی پشیمانی کے اپنی تقریر مکمل کی۔

Most Popular