امریکہ کی ریاست ٹیکساس میں آنے والے سمندری طوفان کے بعد پانی کی سطح تیزی سے بلند ہونے لگی ہے

امریکہ کی ریاست ٹیکساس میں آنے والے سمندری طوفان کے بعد پانی کی سطح تیزی سے بلند ہونے لگی ہے

ہوسٹن شہر میں سمندری طوفان ’ہاروی‘ کی وجہ سے اب تک انچاس انچ بارش ہو چکی ہے، جس سے سڑکیں دریا کا منظر پیش کر رہی ہیں، ماہرین کے اندازے کے مطابق طوفان کی وجہ سے ایک ہفتے میں اتنی بارش ہوگی جتنی ایک سال میں متوقع ہوتی ہے، امریکہ کے چوتھے بڑے شہر ہوسٹن کی آبادی تقریباً چھیاسٹھ لاکھ ہے اور طوفان کے نتیجے میں ہونے والی بارش کے بعد اس کے قرب و جوار سے اب تک دو ہزار افراد کو محفوظ مقام پر منتقل کیا گیا ہے، ہیلی کاپٹر کی مدد سے بھی لوگوں کو نکالا جا رہا ہے، حکام کا کہنا ہے کہ اب تک کم سے کم آٹھ افراد ہلاک ہوچکے ہیں، حکام کے مطابق سیلاب سے متاثرہ پانچ لاکھ افراد کی امداد کی جا رہی ہے جبکہ تیس ہزار افراد کو ہنگامی پناہ گاہوں میں منتقل کیا گیا ہے، امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے ٹیکساس کی قریبی ریاست لوزیانا میں بھی ہنگامی حالت نافذ کرنے کی منظوری دے دی ہے، بی بی سی سے بات چیت کرتے ہوئے صدر ٹرمپ نے کہا کہ وہ ہنگامی حالات سے نمٹنے کے لئے کانگریس میں فنڈنگ کے معاملے پر بات کر رہے ہیں ۔دوسری جانب طوفان سے ہلاکتوں کی تعداد گیارہ ہوگئی جن میں ایک ہی خاندان کے چھ افراد بھی شامل ہیں۔ریسکیوکاعملہ تاحال تمام علاقوں تک نہیں پہنچ سکا اس لیے خدشہ ظاہر کیاجارہاہےکہ اموات کی تعداد مزید بڑھ سکتی ہے

Most Popular