امریکا کو ایک بار پھر سے امیر ملک بنائیں گے۔ ٹرمپ

امریکا کو ایک بار پھر سے امیر ملک بنائیں گے۔ ٹرمپ

)امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے پیش رو براک اوباما کے دور میں متعارف کرائے گئے ماحولیاتی تحفظ کے قانون کو منسوخ کرتے ہوئے امریکا کو ایک بار پھر سے امیر ملک بنانے کے عزم کا اعادہ کیا ہے۔امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے سابق صدر براک اوباما کی موسمیاتی تبدیلی سے متعلق پالیسی کی منسوخ کرنے کے صدارتی حکم نامے پر نامے پردستخط کردیئے ہیں جس کے بعد اوباما دور کے ایک درجن سے زائد منصوبے منسوخ ہو گئے ہیں۔صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے اوباما دور کے منسوخ کئے گئے منصوبوں میں کاربن کے اخراج میں کمی کا کلین پاور پلان بھی شامل ہے۔ اس موقع پر صدرٹرمپ کا کہنا تھا کہ ہم امریکا کو دوبارہ امیر بنائیں گے، نوکریاں لائیں گے اورعوام کے خواب پورے کریں گے۔ وائٹ ہاوس کے ترجمان اسپائسر نے اپنے ایک بیان میں کہا کہ اس صدارتی اقدام سے امریکا میں اقتصادی سرگرمیوں میں اضافے کے ساتھ ساتھ روزگار کے مواقع پیدا ہوں گے اور عوام کو سستی بجلی کی فراہمی بھی ممکن ہو سکے گی۔ٹرمپ کے اس اعلان کو توانائی کے استعمال کی آزادی کا ایگزیکٹو آرڈر قرار دیا گیا ہے۔ اس طرح امریکا میں زمین سے حاصل ہونے والے فوسل فیول انڈسٹری کو تقویت حاصل ہو جائے گی۔ تر جما ن کے مطا بق صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے نئے حکم نامے کے تحت اوباما دور کے ماحولیاتی ضابطے ختم ہوجائیں گے۔ جس کے تحت امریکا میں تمام کمپنیوں کو اس بات کا پابند کیا گیا تھا کہ وہ ماحول مخالف گیسوں کے اخراج میں بتدریج کمی کریں گی۔حکم نامے کی دستخطی تقریب کے دوران ، ٹرمپ نے کہا کہ ہم اپنے کان کنوں کو پھر سے برسر روزگار بنائیں گے اور حقیقی صاف کوئلہ پیدا کریں گے۔ٹرمپ اس سے قبل ماحولیات سے متعلق پالیسی کے خلاف بات کرتے رہے ہیں۔ اپنی صدارتی انتخابی مہم کے دوران، ا±نہوں نے صدر اوباما کے صاف بجلی کے منصوبے کو ”بیکار“ قرار دیا تھا۔

Most Popular