ڈونلڈ ٹرمپ سیلاب کی تباہ کاریوں کا جائزہ لینے کے لئے ٹیکساس کا دورہ کر رہے ہیں

 ڈونلڈ ٹرمپ سیلاب کی تباہ کاریوں کا جائزہ لینے کے لئے ٹیکساس کا دورہ کر رہے ہیں

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے سمندری طوفان سے متاثرہ علاقے ٹیکساس کا دورہ کیا، ٹیکساس پہنچنے پر صدر ٹرمپ کو سیلاب کے بارے میں بریفنگ دی گئی، صدر ٹرمپ نے کہا کہ وہ جلد ازجلد اقدامات اٹھائیں گے تاکہ ریاست ٹیکساس کو اس قدرتی آفت سے نمٹنے میں آسانی ہو، سمندری طوفان کے بعد شدید بارشوں سے ڈیموں میں پانی انتہائی سطح سے اوپر آ گیا ہے، فلڈ کنٹرول آفیسر کا کہنا ہے کہ ڈیموں سے پانی کے اخراج کے سبب قریب آبادیوں میں سیلابی پانی میں اضافہ ہو سکتا ہے، ڈیموں میں پانی کی سطح بلند ہونے کے بعد امریکہ کے چوتھے بڑے شہر ہوسٹن میں سیلابی ریلے کے سبب تین ہزار سے زیادہ مکانات پانی میں بہہ گئے ہیں، شہر کے میئر کا کہنا ہے کہ ڈیم سے پانی کے اخراج کے بعد مزید دس ہزار افراد کو ہنگامی پناہ دینے کے لئے وفاق سے مدد مانگی ہے، امریکی ریاست ٹیکساس میں انتظامیہ کے اندازے کے مطابق سمندری طوفان 'ہاروی' سے متاثرہ ساڑھے چار لاکھ افراد کو مدد کی ضرورت ہے، سمندری طوفان ہاروی کی شدت میں کمی کے باوجود شدید بارشوں کی وجہ سے سیلاب کی صورتحال ہے،ہوسٹن میں ہزاروں افراد اپنا گھر بار چھوڑ کر محفوظ مقامات پر منتقل ہو رہے ہیں جبکہ ریسکیو کا عملہ سیلاب میں پھنسے افراد کو نکالنے میں مصروف ہے،
سیلاب کی وجہ سے اب تک کم سے کم نو افراد ہلاک ہو چکے ہیں 

امریکی ریاست ٹیکساس میں سیلاب کی تباہ کاریوں کے بعد امدادی کارروائیاں جاری ہیں

امریکی ریاست ٹیکساس میں سیلاب کی تباہ کاریوں کے بعد امدادی کارروائیاں جاری ہیں، سیلاب نے امریکہ کے چھوتھے بڑے شہر ہوسٹن کو تباہ کر کے رکھ دیا،، ادھر امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے سمندری طوفان سے متاثرہ علاقے کا دورہ کیا، ٹیکساس پہنچنے پر صدر ٹرمپ کو سیلاب کے بارے میں بریفنگ دی گئی، صدر ٹرمپ نے کہا کہ وہ جلد ازجلد اقدامات اٹھائیں گے تاکہ ریاست ٹیکساس کو اس قدرتی آفت سے نمٹنے میں آسانی ہو،ہوسٹن میں سمندری طوفان کے بعد شدید بارشوں سے ڈیموں میں پانی انتہائی سطح سے اوپر آ گیا ہے، امریکہ کے چوتھے بڑے شہر ہوسٹن میں سیلابی ریلے کے سبب تین ہزار سے زیادہ مکانات پانی میں بہہ گئے ہیں،، انتظامیہ کے اندازے کے مطابق سمندری طوفان 'ہاروے' سے متاثرہ ساڑھے چار لاکھ افراد کو مدد کی ضرورت ہے، جبکہ اب تک ایک درجن کے قریب ہلاکتیں ہو چکی ہیں

Most Popular