معراج شریف مسلمانوں کے لیے بہت اہمییت کی حامل ہے

معراج شریف مسلمانوں کے لیے بہت اہمییت کی حامل ہے

حضور صلی اللہ علیہ وسلم نے دس سال تک اہل مکہ کے تمام ظلم و جبر اور بدتمیزی کو خندہ پیشانی سے برداشت کیا تو اللہ تعالیٰ کی رحمت جوش میں آئی اور خالق کائنات نے اپنے محبوب کو اپنے دیدار سے مشرف فرمانے کا فیصلہ کیا۔ ستائیس رجب کی شب حضرت جبرائیل علیہ السلام تشریف لائے اور رب العالمین کا پیغام پہنچایا۔ نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کے حضور سفید براق پیش کیا گیا۔ حضور صلی اللہ علیہ وسلم حضرت جبرائیلؑ کی معیت میں مسجد اقصیٰ پہنچے جہاں تمام انبیا کرام نے آپ کی اقتداء میں نماز ادا کی۔ پھر آپ آسمانوں کی طرف عازم سفر ہوئے۔ آپ نے دوران سفر اللہ کی بہت سی نشانیاں بھی دیکھیں جن میں جنت اور دوزخ بھی شامل تھی۔ حضرت جبرائیل سدرہ المنتہیٰ کے مقام پر ٹھہر گئے، وہاں سے آپ اکیلے ہی آگے بڑھے۔ اللہ تعالیٰ نے آپ کو اپنے دیدار سے مشرف فرمایا۔نیٹ۔۔۔ سرلا مکاں سے طلب ہوئیحضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے اگلی صبح اہل قریش کو شب معراج کا واقعہ سنایا۔ حضرت ابوبکر نے آقاؑ کے فرمان کی تصدیق کی جس پر انہیں صدیق کا خطاب ملا۔ شب معراج کو ہی امت محمدیہ کو نماز کا تحفہ ملا۔ ستائیس رجب کو مسلمان خصوصی عبادات کرتے ہیں، نفلی روزہ رکھتے ہیں اور دعائیں مانگتے ہیں 

Most Popular