سانحہ ماڈل ٹاؤن رپورٹ پبلک نہ کرنےکی پنجاب حکومت کی اپیل مسترد

سانحہ ماڈل ٹاؤن رپورٹ پبلک نہ کرنےکی پنجاب حکومت کی اپیل مسترد

پنجاب حکومت کی مشکلات میں اضافہ ہوگیا۔ لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس عابد عزیز شیخ کی سربراہی میں قائم تین رکنی فل بینچ نے سانحہ ماڈل ٹاؤن کی رپورٹ پبلک نہ کرنے کی حکومت کی اپیل پر محفوظ فیصلہ سنادیا۔ عدالت عالیہ نے رپورٹ پبلک نہ کرنے کی حکومت کی اپیل مسترد کردی۔
فل بینچ نے تیس روز کے اندر انکوائری رپورٹ شائع کرنے کا حکم دیدیا۔ عدالت نے ریمارکس دیئے کہ سانحہ ماڈل ٹاؤن کا غیر جانبدارانہ اورشفاف ٹرائل کیا جائےاور متاثرین کو فوری طور پر انکوائری رپورٹ دی جائے۔ عدالت عالیہ نے سانحہ میں نامزد ملزم پولیس افسران اور اہلکاروں کی اپیل بھی مسترد کردی۔ اس سے قبل ہائیکورٹ کے جسٹس مظاہر علی اکبر نقوی نے انکوائری رپورٹ پبلک کرنے کا حکم دیا تھا۔ پنجاب حکومت نے فیصلے کے خلاف انٹرا کورٹ اپیل دائرکی تھی جسے عدالت نے مسترد کرتے ہوئے رپورٹ منظر عام پرلانے کا حکم برقرار رکھا۔

Most Popular