قومی اسمبلی کے اجلاس میں مسلم لیگ ن اور تحریک انصاف کے ارکان آپے سے باہر ہو گئے

قومی اسمبلی کے اجلاس میں مسلم لیگ ن اور تحریک انصاف کے ارکان آپے سے باہر ہو گئے


قومی اسمبلی کا اجلاس ڈپٹی سپیکر کی زیر صدارت ہوا۔۔ تحریک انصاف کے مراد سعید نے نقطہ اعتراض پر پنجاب میں پختونوں کیخلاف کارروائی کا معاملہ اٹھایا اور رانا ثناءاللہ کو کڑی تنقید کا نشانہ بنایا۔۔ اس کے جواب میں حکومتی رکن جاوید لطیف نے عمران خان کو آڑے ہاتھوں لیا اور غدار قرار دے دیا۔۔ پی ٹی آئی ارکان کے احتجاج پر ماحول گرم ہوا تو ڈپٹی سپیکر نے اجلاس ملتوی کر دیا۔۔ جاوید لطیف اور مراد سعید دونوں کا ایوان کے باہر آمنا سامنا ہوا، تلخ جملوں کے تبادلے پر جاوید لطیف نے مراد سعید کو مکا رسید کر دیا, دونوں ارکان ایک دوسرے کو مارنے کیلئے بے چین نظر آئے, لابی سے نکل کر باہر دروازے تک ماحول گرم رہا۔۔ یہاں بھی تلخی کے بعد مراد سعید کو جوابی وار کا موقع مل گیا اور لگے ہاتھ جاوید لطیف کو مکا رسید کر دیا, مراد سعید کا کہنا تھا کہ عمران خان کے بارے میں نازیبا الفاظ برداشت نہیں کر سکتے, جاوید لطیف نے اپنا دفاع کرتے ہوئے کہا کہ پی ٹی آئی والے اخلاق سے عاری ہیں۔۔ بات کرتے ہیں تو جواب سننے کا حوصلہ بھی رکھیں, مسلم لیگ ن اور تحریک انصاف کے درمیان تلخی اب لڑائی میں بدل چکی ہے۔۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ سیاسی اختلافات میں اخلاق کا دامن نہ چھوڑا جائے

Most Popular