وزیر اعظم کو مواد دکھایا جائے تاکہ انہیں معاملے کی حساسیت کا اندازہ ہوسکے,جسٹس شوکت عزیز صدیقی

وزیر اعظم کو  مواد دکھایا جائے تاکہ انہیں معاملے کی حساسیت کا اندازہ ہوسکے,جسٹس شوکت عزیز صدیقی

اسلام آباد ہائیکورٹ میں جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے سوشل میڈیا پر گستاخانہ مواد کی تشہیر کے خلاف درخواست پر سماعت کی۔ انہوں نے ریمارکس دیئے کہ معاملہ صرف میرا نہیں، پوری جوڈیشری اس معاملہ پر ساتھ کھڑی ہے۔ جسٹس شوکت عزیز صدیقی نے وزیر اعظم کا حلف نامہ پڑھ کر سنایا۔ انکا کہنا تھا کہ وزیر اعظم کو بھی یہ مواد دکھایا جائے تاکہ انہیں معاملے کی حساسیت کا اندازہ ہوسکے۔ یہ اس وقت سب سے بڑا مسئلہ ہے ۔ پتہ نہیں لوگوں کو کیسے نیند آجاتی ہے۔ کیس میں عمل درآمد نہ ہوا تو وزیراعظم کو بھی طلب کریں گے۔ مقدمے میں حکم نہیں دوں گا صرف گزارش کروں گا۔ مسئلے کا حل نکالا جائے۔ عدالت نے چیئرمین پی ٹی اے کو اب تک کئے گئے اقدمات کی رپورٹ پیش کرنے کا بھی حکم دیدیا۔ سیکریٹری داخلہ نے عدالت کو آگاہ کیا کہ کل عدالتی حکم کے بعد اجلاس میں چوہدری نثار علی خان کو تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ فیصلہ کیا ہے کہ گستاخانہ پیجز اپ لوڈ کرنے والوں کے خلاف ایف آئی آر درج کراکے ایف آئی اے کے ذریعے انکوائری کریں گے۔ چیئرمین پی ٹی اے نے عدالت کو آگاہ کیا کہ تمام چھ پیجز بلاک کر دیئے گئے ہیں۔ مزید بھی دیکھ رہے ہیں۔ اگر کوئی چیز سامنے آئی تو بھر پور کردار ادا کریں گے۔ عدالت نے ہدایت کی کہ اس معاملے کی انکوائری کیلئے غیر مسلم شخص کو مقرر نہ کیا جائے۔ کیس کی مزید سماعت تیرہ مارچ تک ملتوی کردی گئی

Most Popular