سپریم کورٹ نے شریف فیملی کی شوگرملز کھولنے کے حکم امتناع کی درخواست مسترد کردی

سپریم کورٹ نے شریف فیملی کی شوگرملز کھولنے کے حکم امتناع کی درخواست مسترد کردی

چیف جسٹس پاکستان کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے شریف خاندان کی شوگرملز منتقلی سے متعلق کیس کی سماعت کی۔ سماعت شروع ہوئی تو جہانگیر ترین کے وکیل نے کسانوں سے گنا خریدنے کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ علاقے کی پانچ شوگر ملزکسانوں سے گنا خریدیں گی, سپریم کورٹ نے شریف فیملی کی شوگرملز کھولنے سے متعلق حکم امتناع کی درخواست مسترد کردی, چیف جسٹس ثاقب نثارنے کہا کہ کسانوں کا نقصان نہ ہو، پورا معاوضہ ملے۔ جہانگیر ترین کی جانب سے کرائی گئی یقین دہانی پرمن وعن عمل کیا جائے ۔ درخواستگزار کے وکیل نے اجازت ملنے والی شوگرملزکی استداد کم ہونے کا بتایا توچیف جسٹس نے کہا کہ لاہورمیں کسانوں کے اجلاس کی تصاویران کے پاس آ چکی ہیں۔ کسانوں کو سپانسر کرنے والے کے بارے میں معلوم ہے بابا رحمتے کے ساتھ سچ بولیں گے توسب ٹھیک رہے گا۔ جس کے آنکھ اورکان عدالت کے اندر اور باہر کھلے نہیں ہوں وہ کمزورچیف جسٹس ہوگا۔ چیف جسٹس نے گنا خریدنے کی عمل کی مانیٹرنگ کی ذمہ داری خود لیتےہوئے کہا کہ گنا خریداری میں کسی قسم کی شکایت پرچیمبر میں سماعت کریں گے ،سپریم کورٹ نے شریف فیملی کی لاہور ہائیکورٹ کے فیصلے کیخلاف اپیلیں سماعت کیلئے منظورکرلیں جس سے جنوبی پنجاب سے شوگر ملزکی منتقلی روک دی جس کےبعد سماعت ملتوی کردی گئی

Most Popular