بانی پاکستان کو ہم سے بچھڑے انہتر برس بیت گئے، قوم اپنے نجات دہندہ کو آج بھی سلام پیش کرتی ہے

بانی پاکستان کو ہم سے بچھڑے انہتر برس بیت گئے، قوم اپنے نجات دہندہ کو آج بھی سلام پیش کرتی ہے

پچیس دسمبر اٹھارہ سو چھہتر کو کراچی میں پیدا ہونے والے قائداعظم محمد علی جناح نے اپنی سیاسی زندگی کی شروعات کانگریس میں شمولیت اختیار کرکے کی لیکن وہ بہت جلد ہندوؤں کی عیاری جان گئے۔ جس کے بعد بابائے قوم نے انیس سو تیرہ میں آل انڈیا مسلم لیگ میں باقاعدہ شمولیت اختیار کی اور وہ برصغیر پاک وہند کے مسلمانوں کو انگریزوں کے تسلط سے نجات دلانے اور ان کے لیے الگ وطن کے حصول کی جدوجہد میں مصروف ہوگئے ۔قائد اعظم کی انتھک محنت کی بدولت چودہ اگست انیس سو سنتالیس کو پاکستان ایک آزاد مملکت کی حیثیت سے دنیا کے نقشے پر ابھرا اور بابائے قوم محمد علی جناح ملک کے پہلے گورنر جنرل بنے۔

لیکن آزادی کے بعد قوم کو اس عظیم محسن کا ساتھ صرف تھوڑا عرصہ ہی میسر آیا اور مسلم دنیا کے یہ پروقار رہنما گیارہ ستمبر انیس سو اڑتالیس کو قوم کو روتا چھوڑ کر خالق حقیقی سے جاملے۔

Most Popular