پاکستان مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں مشاورت کرانے پر غور کر رہا ہے

پاکستان مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں مشاورت کرانے پر غور کر رہا ہے

پاکستان کشمیر میں بھارتی مظالم کو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں مشاورت کروانے پر غور کررہا ہے۔ اسی تناظر میں وزیراعظم کے نمائندہ خصوصی مشاہد حسین اور شذرا علی نیویارک میں عالمی نمائندوں سے ملاقاتیں کر رہے ہیں، پاکستانی مندوب ملیحہ لودھی نے پاکستانی وفد اور کمیونٹی ممبرز کے اعزاز میں عشائیے کا اہتمام کیا،، اس سے پہلے ملیحہ لودھی نے پاکستانی وفد کی اقوام متحدہ میں صحافیوں کے لیے ظہرانے پر گفتگو کے دروان کہا کہ تھا کہ کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ نہیں بلکہ عالمی سطح پر تسلیم شدہ متنازعہ معاملہ ہے اور پاکستان کشمیریوں کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حق خود ارادیت دینے کا حامی ہے۔ وزیراعظم کے خصوصی نمائندے مشاہد حسین سید کا کہنا تھا کہ مقبوضہ کشمیر کی صورتحال اور بھارتی جارحیت سے خطے میں امریکی مفادات متاثر ہوں گے۔ پاکستان اور بھارت میں اقوام متحدہ کے فوجی مبصر گروپ کا کردار وسیع ہونا چاہیے۔ سلامتی کونسل کوبھی اپنی قراردادوں پر ذمے داری سے عمل کروانا ہوگا۔ پاکستانی نمائندوں نے امن مشن دفتر کا دورہ بھی کیا جہاں مشاہدحسین سید اور ڈاکٹر شذرا منصب نے اقوام متحدہ کے انڈر سیکریٹری جنرل سے ملاقات کی ہے۔

Most Popular