کرم ایجنسی میں امریکی ڈورن حملے میں تین افراد ہلاک ہوگئے

کرم ایجنسی میں امریکی ڈورن حملے میں تین افراد ہلاک ہوگئے

امریکی انتظامیہ نے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی نئی افغان پالیسی کو عملی جامع پہنانا شروع کردیا، نئی پالیسی کے بعد امریکی ڈورن طیارے نے پاکستان کی سرزمین پر پہلا حملہ کردیا، غیرملکی میڈیا کی رپورٹس کے مطابق امریکی ڈرون طیارے نے افغان سرحد کے ساتھ کرم ایجنسی میں ایک گھر پر دو میزائل داغے، جس میں مبینہ طور پر حقانی نیٹ ورک سے تعلق رکھنے والے جنگجوؤں کو نشانہ بنایا گیا، غیرملکی میڈیا کے مطابق ڈورن حملہ مولوی محب کے گھر پر کیا گیا جس میں تین افراد ہلاک ہوئے،افغان طالبان کے ایک کمانڈر کا کہنا ہے مولوی محب کا حقانی نیٹ ورک سے تعلق تھا، لیکن وہ نمایاں شخصیت نہیں تھی، جبکہ ایک اور افغان طالبان کمانڈر نے موقف اپنایا کہ مولوی محب افغان طالبان کا حصہ تھا، جبکہ وہ حقانی نیٹ ورک اور طالبان کے درمیان کوئی فرق نہیں رکھتے یہ صرف مغربی میڈیا کا پروپیگنڈا ہے۔

Most Popular