لاہور سمیت پنجاب میں بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ جاری

لاہور سمیت پنجاب میں بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ جاری

اپریل میں گرمی نے ریکارڈ توڑے تو لوڈشیڈنگ کا جن بھی بوتل سے باہر آ گیا ،، ہائیڈل ، تھرمل اور دیگر ذرائع سے بجلی کی رسد اور طلب پوری نہ ہو سکی ،، جس کے باعث شہروں اور دیہاتوں میں غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کئی گنا بڑھ گئی ،، لاہور میں لیسکو کے گرڈ سٹیشنز بھی جواب دے گئے ، بند روڈ، اقبال ٹاﺅن، چوبرجی، والٹن، گلدشت ٹاﺅن، جوہر ٹاﺅن، نشتر ٹاﺅن اور راوی ٹاون میں کئی گھنٹے بجلی بند رہی ،، ذرائع کے مطابق اس وقت لاہور کے ستر فیصد علاقوں میں چودہ سے پندرہ گھنٹے کی لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے ادھر شیخوپورہ میں لوڈشیڈنگ کے تمام ریکارڈ ٹوٹ گئے ، 24 گھنٹوں میں صرف چار گھنٹے بجلی میسر رہی،، حافظ آباد ، گوجرانوالہ ، سیالکوٹ ، ساہیوال ، گجرات ، شاہ کوٹ ، فیصل آباد اور وزیرآباد سمیت دیگر علاقوں میں بھی کئی گھنٹے بجلی بند رہی ادھر لوڈشیڈنگ کے باعث کاروبار زندگی بری طرح مفلوج ہے  صنعتی تجارتی اداروں کے علاوہ دیگر روزمرہ کی زندگی کا نظام درہم برہم ہونے کے ساتھ گھریلوں نظام بھی بری طرح متاثر ہوکر رہ گیا ہے۔ گرڈ سٹیشنز کی مرمت کے نام پر پانچ سے سات گھنٹے بجلی کی بندش معمول بن گیا ہے ، کئی علاقوں میں لوڈشیڈنگ کیخلاف احتجاجی مظاہرے میں ہوئے دوسری جانب بجلی کی طویل لوڈشیڈنگ کے باعث پانی کی بھی شدید قلت پیدا ہو گئی ہے،، کئی علاقوں مکمل طور پر پانی سے محروم ہیں  

Most Popular