3 روزہ خانہ شماری کے بعد مردم شماری کا عمل شروع ہو گیا

3 روزہ خانہ شماری کے بعد مردم شماری کا عمل شروع ہو گیا

تین روزہ خانہ شماری کے بعد پنجاب، سندھ، خیبرپختونخوا، بلوچستان، آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان کے 63 اضلاع میں مردم شماری کا عمل جاری ہے، شمارکندگان کی ٹیم گھر گھر جا کر مردم شماری کے فارم فراہم کرے گی،جن پر معلومات دی جائیں گی،اہل خانہ کی فراہم کردہ معلومات حتمی تصور ہونگی، کسی بھی فرد کو پنسل استعمال کرنے کی اجازت نہیں ہے، کچی پنسل استعمال کرنے والوں کے خلاف ایکشن لیا جائے گا۔۔۔مردم شماری فارم میں کوڈ بڑھا دیئے گئے، معذور اور خواجہ سراؤں کا بھی اندراج ہو گا، چیف شماریات آصف باجوہ نے عوام کو ہدایت کی ہے کہ وہ پوری تسلی کر کے معلومات دیں، تمام اضلاع سے سیل ریکارڈ شماریات ہیڈ آفس جمع ہو گا۔ مردم شماری کیلئے قائم کیا گئے کنٹرول روم مسلسل نگرانی کر رہے ہیں،مردم شماری کے لئے سیکیورٹی کے بھی انتہائی سخت انتظامات کئے گئے ہیں۔۔ پہلے مرحلے کے دوران مردم شماری کا عمل پندرہ اپریل تک جاری رہے گا

Most Popular