نواسہ رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم حضرت امام حسن رضی اللہ تعالی عنہ کا یوم شہادت نہایت عقیدت و احترام سے منایا جا رہا ہے

نواسہ رسول صلی اللہ علیہ والہ وسلم حضرت امام حسن رضی اللہ تعالی عنہ کا یوم شہادت نہایت عقیدت و احترام سے منایا جا رہا ہے

نعت میں تو پنجتن کا غلام ہوں رسول اکرم حضرت محمد صلی اللہ علیہ والہ وسلم کے نواسے، حضرت علی رضی اللہ تعالی عنہ اور حضرت فاطمہ رضی اللہ تعالی عنہ کے بڑے صاحبزادے حضرت امام حسن رضی اللہ تعالی عنہ کی ولادت با سعادت پندرہ رمضان المبارک سن تین ہجری کو ہوئی۔ ولادت کے بعد سرور کائنات حضرت محمد صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے امام حسن کی آنکھوں میں لعاب دہن لگایا اور اس کے بعد داہنے کان میں اذان اور بائیں کان میں اقامت کہی، پھردعائے خیرفرما کر حسن نام رکھا،،، تاریخ انسانی میں یہ نام پہلے کسی کا نہ تھا روایت کے مطابق ولادت کے ساتویں روز سرور کائنات حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے حکم سے ایک مینڈھا منگوایا گیا اور رسم عقیقہ ادا کردی گئی۔ امام حسن رضی اللہ تعالی عنہ کی کنیت ابو محمد ہے ۔ حضرت محمد صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم کی مشہور حدیث کے مطابق حسن اور حسین جنت میں نوجوانوں کے سردار ہوں گے۔ حضرت امام حسن رضی اللہ تعالی عنہ کو" امن کا شہزادہ "بھی کہا جاتا ہے۔ حضرت امام حسن رضی اللہ تعالی عنہ کی پوری زندگی صبر و رضا سے عبارت ہے۔ آپ رضی اللہ تعالی عنہ کا ایثار امت مسلمہ کے لئے مشعل راہ ہے۔

Most Popular