وزیر اعظم نے زلزلے سے متاثرہ علاقے شانگلہ کا دورہ کیا جہاں انہیں قدرتی آفت سے ہونے والے نقصانات پر بریفنگ دی گئی

وزیر اعظم نے زلزلے سے متاثرہ علاقے  شانگلہ کا دورہ کیا جہاں انہیں  قدرتی آفت سے ہونے والے نقصانات پر بریفنگ دی گئی

وزیر اعظم نواز شریف زلزلے سے متاثرہ علاقے شانگلہ پہنچے ۔وفاقی وزیر اطلاعات پرویز رشید اور گورنر خیبر پی کے مہتاب عباسی بھی ان کے ہمراہ تھے ۔ اس موقع پر وزیر اعظم کو زلزلے سے ہونے والی نقصانات پر بریفنگ دی گئی ۔انہیں بتایا گیا کہ زلزلے سے انچاس افراد جاں بحق ہوئے تاہم ستاون افراد کی ہلاکت کی غیر مصدقہ اطلاعات ہیں ۔دور دراز علاقے ہونے کی وجہ سے اطلاعات جمع کرنے میں مشکلات کا سامنا ہے سردی زیادہ ہے اور متاثرین کو خیموں اور کمبل کی اشد ضرورت ہے ۔انہیں بتایا گیا کہ متاثرہ علاقوں میں امدادی کارروائیاں جاری ہیں ۔دو سو سے زائد امدادی کارکن کام کررہے ہیں ۔رات گئے تک تمام اہم سڑکیں کھول دی گئی ہیں ۔اس موقع پر نواز شریف نے ہدایت کی کہ متاثرہ افراد کو ضرورت کا سامان جلد سے جلد پہنچا یا جائے جبکہ خوراک کی فراہمی کو بھی یقینی بنایا جائے ۔ انہوں نے کہا کہ تباہ حال مکانات کی تعمیر نو پر اخراجات کا تخمینہ بھی لگایا جائے

وزیراعظم نوازشریف نے زلزلے سے متاثرہ علاقوں میں نقصانات کا جائزہ لگانے اور امدادی سرگرمیاں تیز کرنے کی ہدایات جاری کر دیں۔

وزیر اعظم کی زیر صدارت اعلٰی سطح کے اجلاس میں آرمی چیف جنرل راحیل شریف ،ڈی جی ایم او چئیرمین این ڈی ایم اے اور وفاقی وزرا نے شرکت کی، اجلاس میں این ڈی ایم کے چیئرمین نے ملک بھر میں زلزلے سے ہونے والے جانی اور مالی نقصانات کے حوالے سےشرکا کو بریفنگ دی۔ اجلاس میں پاک فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے بھی وزیر اعظم کو پاک فوج کی جانب سے جاری امدادی سرگرمیوں سے آگاہ کیا۔ اس موقع پر وزیراعظم نے چیئرمین این ڈی ایم اے اور متعلقہ اداروں کو ہدایات جاری کیں کہ امدادی سرگرمیوں میں مزید تیزی لائی جائے اور بے گھر افراد کی مدد کے لیے سرگرمیوں کو مزید بڑھایا جائے ۔انہوں نے وفاقی وزرا کو اپنے علاقوں میں صورت حال کا جائزہ لینے کی ہدایات بھی جاری کیں۔

Most Popular