زینب کیساتھ وہ کچھ کیا گیا جس پرجنگل کے درندے بھی شرمندہ ہیں: سراج الحق

زینب کیساتھ وہ کچھ کیا گیا جس پرجنگل کے درندے بھی شرمندہ ہیں: سراج الحق

امیر جماعت اسلامی سراج الحق قصور میں درندگی کے بعد قتل کی گئی سات سالہ زینب کے گھر گئے اور اہلخانہ سے تعزیت کی۔ اس موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انکا کہنا تھا کہ بچی کے لاپتہ ہونے کے بعد پانچ روز تک رشتے دار تھانے میں فریاد کررہے تھے جو کسی نے نہیں سنی۔ ملک میں غریب کے خون کی کوئی قیمت نہیں۔ اللہ کے قہر سے بچنے کا ایک ہی راستہ ہے کہ ہم ظالموں کوانجام تک پہنچادیں۔ انکا کہنا تھا کہ وزیراعلیٰ کی ایلیٹ اور ڈولفن فورس کہاں تھی۔ شہبازشریف کے نعرے محض اشتہارات تک محدودہیں۔ حکمرانوں کا گریبان پکڑیں گے۔ شہبازشریف رات کے اندھیرے میں زینب کے گھر پہنچے۔ رات کےاندھیرےمیں تو چھاپےمارےجاتے ہیں۔وزیراعلی کو دن کی روشنی میں عوام کو وضاحت کرنی چاہیے تھیسراج الحق کا کہنا تھا کہ پنجاب پولیس کو شہریوں پر فائرنگ کرنے پر شرم آنی چاہیے۔ پولیس صرف وی آئی پی کی خدمت میں ہوتی ہے۔ پنجاب کوظلم اور ستم کا مرکزبنادیا گیا ہے

Most Popular