جہانگیرترین نےنااہلی فیصلےکےخلاف سپریم کورٹ میں نظرثانی اپیل دائر کردی

  جہانگیرترین نےنااہلی فیصلےکےخلاف سپریم کورٹ میں نظرثانی اپیل دائر کردی

تحریک انصاف کے رہنماجہانگیرترین نے اپنی نااہلی کے خلاف نظرثانی اپیل سپریم کورٹ میں دائرکردی ،نظرثانی اپیل کے ساتھ بیان حلفی بھی جمع کروایا،، جس میں کہا گیا کہ کاغزات نامزدگی میں جان بوجھ کراثاثےچھپانے کی کوشش نہیں کی ،، ٹرسٹ کے قیام کا مقصد بچوں کوبرطانیہ میں گھرکی فراہمی تھا اورحفاظتی اقدام کے تحت اہلیہ اور خود کو تاحایات بینیفشری بنایا، جہانگیرترین نے کہاکہ ٹرسٹ پاکستان کے بینکنگ چینلزسے واجبات کی منتقلی کے زریعے قائم کیا،ان کے چار بچے ہیں جو سب شادی شدہ اورخود مختارہیں، جہانگیرترین نے سپریم کورٹ سے فیصلے پر نظرثانی کی استدعا کی ہے،،اس سے قبل چیف جسٹس کی سربراہی میں تین رکنی بینچ نے ،، جہانگیر ترین کو لندن جائیداد کوچھپانے پرگزشتہ سال پندرہ دسمبرکوآئین کی دفعہ باسٹھ ون ایف کے تحت تاحایات نااہل قراردیا تھا۔۔

Most Popular