لاہور ہائیکورٹ کے ڈویژنل بنچ نے وزیر قانون پنجاب کی نااہلی کیلئے دائر انٹراکورٹ اپیل پر الیکشن کمیشن، حکومت پنجاب اور دیگر فریقین کو نوٹس جاری کر دئیے

لاہور ہائیکورٹ کے ڈویژنل بنچ نے وزیر قانون پنجاب کی نااہلی کیلئے دائر انٹراکورٹ اپیل پر الیکشن کمیشن، حکومت پنجاب اور دیگر فریقین کو نوٹس جاری کر دئیے

لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس شاہد جمیل پر مشتمل دو رکنی بنچ نے انٹرا کورٹ اپیل کی سماعت کی،،، درخواست گزار کےوکیل نے موقف اختیار کیاکہ رانا ثناء اللہ نے سانحہ ماذل ٹاون کی جوڈیشل کمیشن کے سربراہ کے بارے میں مسلک کے حوالے سے بیانات دیئے ہیں، وزیر قانون رانا ثناءاللہ کے اس نوعیت کے بیانات سے ملک میں انتشار اور افراتفری پھیلنے کا خدشہ ہے، بیانات کی روشنی میں رانا ثناء اللہ اسمبلی رکنیت کے اہل ہیں نہ ہی آئین کے آرٹیکل 63،62 پر پورا نہیں اترتے ہیں۔۔، عدالت عالیہ کے سنگل بنچ نے رانا ثناء اللہ کی اہلیت کے بارے میں حقائق کے برعکس فیصلہ دیا،، عدالت فیصلے کو کالعدم قرار دے کر رانا ثنا اللہ کو نااہل قرار دے۔ عدالت نے الیکشن کمیشن، حکومت پنجاب اور دیگر فریقین کو پانچ دسمبر کے لئے نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا۔

Most Popular