اسلام آباد ہائی کورٹ میں خواجہ آصف کے اقامہ کے خلاف پی ٹی آئی کے رہنما عثمان ڈار کی درخواست پر سماعت , وزیر خارجہ نے لارجر بینچ کی تشکیل کو چیلنج کر دیا

اسلام آباد ہائی کورٹ میں خواجہ آصف کے اقامہ کے خلاف پی ٹی آئی کے رہنما عثمان ڈار کی درخواست پر سماعت , وزیر خارجہ نے لارجر بینچ کی تشکیل کو چیلنج کر دیا

اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس عامر فاروق کی سربراہی میں لارجر بنچ نے وزیرخارجہ خواجہ آصف کے اقامہ سے متعلق دائر درخواست پر سماعت کی، دوران سماعت خواجہ آصف نے اپنا جواب جمع کرایا جس میں لارجر بینچ کی تشکیل کو چیلنج کیا گیا،، متفرق درخواست میں کہا گیا کہ 18 ستمبر کوعدالت نے لارجر بینچ تشکیل دینے کی آبزرویشن دی جبکہ 26 ستمبرکوعدالت نے نوٹس جاری کرتےہوئے جواب طلب کیا۔جواب میں مزید کہا گیا کہ درخواستگزار نے عدالت سے تمام حقائق چھپائے اور وہ نا اہلی کے لئے سپریم کورٹ تک تمام فورم استعمال کر چکے ہیں،،، لارجر بینچ کی تشکیل سے مجھے اپیل کے حق سے محروم کر دیا ہے۔ خواجہ آصف نےاقامہ کی بنیاد پر جواب داخل کرانے کے لیے دس روز کی مہلت مانگ لی۔عدالت نےاستدعا منظور کرتے ہوئے سماعت 30 نومبر تک ملتوی کر دی،،،سماعت کے بعد میڈٰیا سے گفتگو کرتے ہوئے درخوادستگزار اور رہنما تحریک انصاف عثمان ڈار کا کہنا تھا کہ خواجہ آصف تیسری بار عدالت عظمی سے بھاگے ہیں،ان کے خلاف مزید شواہد اور ثبوت موجود ہیں،،آئندہ سماعت پر سب کچھ سامنے لائیں گے۔انہوں نے کہا لگتا ہے خواجہ آصف بھی نواز شریف کی طرح کوئی خط سامنے لے آئیں گے،،اسحق ڈارکے بعد اب خواجہ آصف کے ہسپتال جانے کی باری ہے

Most Popular