نوازشریف نے 3 الگ الگ فرد جرم کو اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا۔

نوازشریف نے 3 الگ الگ فرد جرم کو اسلام آباد ہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا۔

سابق وزیراعظم نواز شریف نے احتساب عدالت کی جانب سے تین الگ الگ فرد جرم کو چیلنج کردیا،درخواست آصف کرمانی کے ذریعے اسلام آباد ہائیکورٹ میں دائر کی گئی،درخواست میں چیئرمین نیب اور جج احتساب عدالت کو فریق بنایا گیا ہے۔درخواست میں موقف اختیار کیا گیا کہ احتساب عدالت کی جانب سے تین ریفرنسزمیں الگ الگ فرد جرم خلاف قانون ہے،تینوں ریفرنسز کو یکجا کر کے فرد جرم عائد کی جائے،مقدمات یکجا کرنے تک احتساب عدالت کو مزید کارروائی سے روکا جائے،درخواست میں کہا گیاکہ تینوں مقدمات کی نوعیت،الزامات اور گواہ ایک جیسے ہیں،احتساب عدالت نے تینوں مقدمات کو یکجا کرنے کی استدعا مسترد کی،آئین کے مطابق فئیر ٹرائل بنیادی حق ہے،درخواست میں استدعا کی گئی کہ19اکتوبر کو احتساب عدالت کی جانب سے عائد کی جانے والی فرد جرم کالعدم قرار دی جائے۔

Most Popular