این اے چار پشاور کے ضمنی انتخاب کیلئے پولنگ کا عمل جاری ہے

این اے چار پشاور کے ضمنی انتخاب کیلئے پولنگ کا عمل جاری ہے

پشاور کے حلقہ این اے چار کا ضمنی معرکہ،،، پولنگ کا عمل صبح آٹھ بجے شروع ہوا، تین لاکھ ستانوے ہزار نو سو چار رجسٹرڈ ووٹرز پندرہ امیدواروں کی قسمت کا فیصلہ کریں گے،،، حلقے میں مرد ووٹرز کی تعداد دو لاکھ 35 ہزار 164 جبکہ خواتین ووٹرز ایک لاکھ 62 ہزار 740 ہے۔،
الیکشن کمیشن کی پولنگ سکیم کے مطابق حلقے میں 269 پولنگ اسٹیشن قائم کیے گئے ہیں ، جن میں مردوں کے لیے 147 ،خواتین کے لیے 111 جبکہ گیارہ مشترکہ پولنگ اسٹیشن قائم کئے گئے ہیں، حلقے میں پولنگ بوتھ کی تعداد 837 ہے جن میں مردوں کےلیے 492 اور خواتین کے لیے 345 پولنگ بوتھ بنائے گئے ہیں،،، لوگوں کی بڑی تعداد ووٹنگ کے عمل میں حصہ لے رہی ہےاین اے چار میں 269 پریزائڈنگ افسران اور 837 اسٹینٹ پریزائڈنگ افسران ڈیوٹی انجام دے رہے ہیں،میں پہلی بار سو الیکٹرانک مشینوں کا استعمال کیا گیا ہے،، اس سے پہلے یہ مشینیں لاہور کے حلقہ این اے ایک سو بیس میں بھی استعمال کی گئی تھیں۔ این اے چار کی یہ نشست تحریک انصاف کے منحرف رکن قومی اسمبلی گلزار احمد کے انتقال کے بعد خالی ہوئی تھی

این اے ایک سو چار میں سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات کئے گئے ہیں

این اے چار کے ضمنی انتخاب کی حساسیت کے پیش نظر پورے حلقے میں سیکیورٹی کے فول پروف انتظامات کئے گئے ہیں، پولنگ کا عمل پاک فوج کی نگرانی میں جاری ہے، پاک فوج کے جوان پولنگ اسٹیشن کے اندر اور باہرتعینات کئے گئے ہیں، الیکشن کمیشن کے مطابق پاک فوج کے افسران کومجسٹریٹ درجہ اول کے اختیارات دئیے گئے ہیں جو دھاندلی سمیت کسی بھی بدنظمی کے خلاف فوری ایکشن لیں گے، پاک فوج کے جوان 27 اکتوبر تک حلقے میں تعینات رہیں گے۔حلقے میں 181کو انتہائی حساس قرار دیا گیا ہے۔ انتہائی حساس پولنگ اسٹیشن پر پندرہ اہلکار جبکہ حساس پر دس اہلکار تعینات کئے گئے ہیں۔ پولنگ ایریامیں اسلحہ لیجانے اور موبائل فون کے استعمال پر مکمل پابندی عائد کی گئی ہے،، ضلعی انتظامیہ کے اعلان کے بعد پورے حلقے میں عام تعطیل ہے

Most Popular