میں ہر کیس جیل سے جیتا

میں ہر کیس جیل سے جیتا

این آر او میں جمہوریت،الیکشن اور نوازشریف کی واپسی بھی تھی،آصف زرداریہمیں پتا تھا کہ ہم پر سیاسی کیسز بنائے گئے ہیں،ہمارے مخالفین پر احسانات کیے گئے ، میں ہر کیس جیل سے جیتا ، آصف زرداری نیب میں میرا آخری کیس بھی ختم ہو گیا ہے،مجھ پر تمام کیسز سیاسی طور پر بنے غلام اسحاق خان کے دور میں مجھ پر 12 کیسز بنائے گئے ،مجھے ایم پی او کے تحت بند کیا گیا، دیگر کیسز میں قید میں رکھا گیاایک ایک کیس کے پیچھے لمبی داستان ہے، آصف زرداریہمیں کچھ دوستوں نے مشورہ دیا میاں برادران کو پنجاب میں حکومت نہ کرنے دیں،آج بھی میرا وزیراعظم نیب ریفرنسز کا سامنا کر رہا ہے،ہم پارٹی میں فیصلے تنہا نہیں کرتے، مشاورت سے کرتے ہیں،ہمارے دور میں کوئی سیاسی قیدی نہیں تھا،ہم نے کبھی انتقامی کارروائی نہیں کی اور نہ آئندہ کریں گےپیپلزپارٹی نے کبھی کرپشن نہیں کی، آصف زرداری کا دعویٰبینظیر بھٹو کی 2 بار حکومت ختم کی گئی لیکن انہوں نے کبھی جی ٹی روڈ پر مارچ نہیں کیا،میری زبان کاٹی گئی، گردن کاٹی گئی، تشدد کو خودکشی کا رنگ دیا گیا،میں نے ان کی حکومت بچائی لیکن اللہ ایسے دوستوں سے بچائے،پانچ سال صدر رہا ایک الزام بھی نہیں لگا، میں نے اختیارات پارلیمنٹ کو منتقل کیمیں نے اپنے تمام کیس جیل میں بیٹھ کر لڑے، جسٹس کھوسہ نے ان کے لیے جو کہہ دیا اس سے بڑی بات کوئی نہیں لکھ سکتا

Most Popular