این اے ایک سو بیس کاضمنی انتخاب فیصلہ کرے گا قوم سپریم کورٹ کے ساتھ ہے یا ڈاکو کے ساتھ:چیرمین تحریک انصاف عمران خان

 این اے ایک سو بیس کاضمنی انتخاب فیصلہ کرے گا قوم سپریم کورٹ کے ساتھ ہے یا ڈاکو کے ساتھ:چیرمین تحریک انصاف عمران خان


چکوال میں جلسہ عام سےخطاب کرتے ہوئے چیئرمین تحریک انصاف نےایک بارپھرنوازشریف، آصف زرداری اور چیئرمین نیب کو خوب آڑے ہاتھوں لیا۔۔ان کا کہنا تھا کہ ملکی تاریخ میں پہلی بارطاقتورکا احتساب شروع ہوا یہی نیا پاکستان ہے۔۔ آصف زرداری کو کلین چٹ دینے پرقوم چیرمین نیب کونہیں چھوڑے گی، انصاف کے ادارے اگر بڑے ڈاکوؤں کو نہیں پکڑیں گے تو وہ ملک ترقی نہیں کرسکتا۔ انہوں نے کہا لاہور میں فیصلہ کن الیکشن ہونے جا رہا ہے جو فیصلہ کرے گا کہ قوم سپریم کورٹ کے ساتھ ہے یا ایک ڈاکو کے ساتھ ہے۔آٹھ دن جیل میں گزارے، کوئی طاقتور، ڈاکو اور مجرم جیل میں نہیں ملا۔قومی اسمبلی میں جتنے بڑے بڑے ڈاکو ہیں اتنے جیلوں میں نہیں۔ عمران خان نے الزام عائد کیا کہ ملتان میٹرو بس منصوبے میں پونے دو ارب روپے کی کرپشن کی گئی جس پر شہباز شریف کیخلاف نیب میں جائیں گے۔ چیئرمین نیب کی وجہ سے کرپشن بڑھی کیونکہ کرپشن کے گاڈ فادر نے اداروں میں اپنے لوگ بٹھائے۔بعد ازاں خواتین کے کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے چیئرمین پی ٹی آئی بولے کہ قرضے لینے والا ملک دنیا میں اپنی عزت کھو دیتا ہے،ٹرمپ جیسا بندہ قرض لینے والے ملک کو برا بھلا کہتا ہے، پاکستان سے ہر سال دس ارب ڈالر چوری ہو کر بیرون ملک جاتے ہیں،جب ایک گھرمیں چوری ہو جائے تواس کا گزارہ کیسےہوگا۔انکاکہنا تھاکہ کچھ دن پہلے سرکاری ریلی بھی ہوئی تھی لیکن عوامی اور قیمے والےنان والی ریلی میں بہت فرق ہوتا ہے۔

Most Popular