سپریم کورٹ کا فیصلہ خوش آئند ہے، سابق وزیر نےکابینہ کو اندھیرے میں رکھ کر غلط فیصلے کرائے۔ فیصل صالح حیات

سپریم کورٹ کا فیصلہ خوش آئند ہے، سابق وزیر نےکابینہ کو اندھیرے میں رکھ کر غلط فیصلے کرائے۔  فیصل صالح حیات

حکومتی اتحادی جماعت مسلم لیگ قاف کے وفاقی وزیر برائے ہاؤسنگ فیصل صالح حیات نے وقت نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ نے کرپشن کے ایک بڑے اسکینڈل کو بےنقاب کیا اورذمہ داروں کے خلاف کارروائی کا حکم دیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سابق وزیرپانی و بجلی راجہ پرویز اشرف نے کابینہ کو غلط اعداد و شمار دیکر غلط فیصلے کرائے، اسی لئے سپریم کورٹ نے نیب کو ان کے خلاف کارروائی کا حکم دیا ہے۔ فیصل صالح حیات نے بتایا کہ رینٹل پاور کے آٹھ منصوبوں پر سود سمیت تئیس ارب روپے لگائے گئے جن میں سے سپریم کورٹ کے حکم پر بارہ ارب روپے واپس لئے جاچکے ہیں۔ ایک سوال کے جواب میں وفاقی وزیر کا کہنا تھا کہ ملک میں اکیس سے بائیس ہزار میگاواٹ بجلی پیدا کرنے کی صلاحیت موجود ہےجبکہ فی الحال نئے منصوبوں کی ضرورت نہیں تاہم مستقبل کی ضروریات کے لئے دیامیر اور بھاشا ڈیم منصوبوں پر کام ہورہا ہے۔ حکومت فرنس آئل خریدنے کے لئے ادائیگیاں کردے تو بجلی کی لوڈشیڈنگ فوری ختم ہوسکتی ہے۔

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular