تشدد کا شکار کمسن گھریلو ملازمہ طیبہ کا طبی معائنہ مکمل کر لیا گیا

تشدد کا شکار کمسن گھریلو ملازمہ طیبہ کا طبی معائنہ مکمل کر لیا گیا

شہر اقتدار میں بدترین تشدد کا نشانہ بننے والی کمسن طیبہ اور اس کے مبینہ والدین کو پمز میں میڈیکل بورڈ کے سامنے پیش کیا گیا، ڈاکٹر جاوید اکرم کی سربراہی میں میڈیکل بورڈ نے طیبہ کا طبی معائنہ کیا، میڈیکل بورڈ میں پلاسٹک سرجن ڈاکٹر حمید،جنرل سرجن ڈاکٹر ایس ایچ وقار، ماہر نفسیات ڈاکٹر عاصمہ اور برن سرجن ڈاکٹر طارق شامل تھے۔۔۔ طبی معائنے کے دوران طیبہ کا ڈی این اے اور پیٹھ پر جلنے کے نشانات کے بھی نمونے لئے گئے، کمسن بچی کے والد اعظم، والدہ اور بھائی زین کے بھی ڈی این اے کے نمونےلیے گئے،گزشتہ دنوں کمسن گھریلو ملازمہ طیبہ کو اس کی مالک خاتون حاضر سروس جج کی اہلیہ ماہین ظفر نے مبینہ طور پر شدید تشدد کا نشانہ بنایا تھا۔۔۔واقعہ کے بعد طیبہ پراسرار طور پر لاپتہ ہو گئی تھی جسے پولیس اور حساس اداروں نے مشترکہ کارروائی کے بعد اسلام آباد کے نواحی علاقے برما ٹاؤن سے تلاش کیا، تازہ تصاویر میں طیبہ کے چہرے پر تشدد کے نشانات ختم ہو گئے ہیں۔۔ سپریم کورٹ نے بدھ کو طیبہ کو عدالت پیش کرنے کا حکم دے رکھا ہے 

Most Popular