دیر بالا میں گردوں کے مرض میں مبتلا نوجوان زندگی و موت کی کشمکش میں مبتلا ہے۔

دیر بالا میں گردوں کے مرض میں مبتلا نوجوان زندگی و موت کی کشمکش میں مبتلا ہے۔

دیر بالا کے نواحی علاقے سے تعلق رکھنے والا چھبیس سالہ نوجوان جو دو سال قبل گردوں کے مرض میں مبتلا ہوا اور اپنی تمام تر جمع پونجی اس بیماری کے علاج پر خرچ کرڈالی ،، لیکن مرض بڑھ تا گیا جوں جوں دوا کی ۔
نوجوان کا کہنا ہے کہ وہ اپنے گھر کا واحد کفیل تھا ،،بیماری کے باعث آمدنی کا سلسلہ بند ہوگیا جبکہ جمع پونجی بھی علاج پر خرچ ہوگئی ۔
دوسری جانب اہل علاقہ کا کہنا ہے کہ اس نوجوان کی بیماری سے متعلق منتخب عوامی نمائندوں اور دیگر تنظٰموں تک آواز پہنچائی گئی لیکن کوئی توجہ نہیں دی گئی ۔ نوجوان نے وزیراعلیٰ کے پی پرویز خٹک اور فلاحی اداروں سے اپیل کی ہے کہ وہ علاج کے لیے مالی معاونت فراہم کرے تاکہ وہ بھی صحت مند زندگی گزار سکے ۔

Most Popular