بلوچستان میں قومی اسمبلی کے حلقہ دو سو ساٹھ کا غیر سرکاری غیر حتمی نتیجہ آگیا،

بلوچستان میں قومی اسمبلی کے حلقہ دو سو ساٹھ کا غیر سرکاری غیر حتمی نتیجہ آگیا،

بلوچستان میں قومی اسمبلی کے حلقہ دو سو ساٹھ کا غیر سرکاری غیر حتمی نتیجہ آگیا،،، ذرائع کے مطابق ضمنی انتخاب کا ٹرن آؤٹ چونتیس فیصد رہا،،، الیکشن میں کل سترہ امیدوار مدمقابل تھے،،، جمعیت علمائے ف کے امیدوار محمد عثمان بادینی نے تنتالیس ہزار سے زائد ووٹ لے کر انتخابی میدان مار لیا،،، بی این پی منگل کے بہادر خان مینگل سینتیس ہزار سے زائد ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے،،، پشتون خوا میپ کے جمال خان تر کئی انیس ہزار سے زائد ووٹ حاصل کر سکے جبکہ پاکستان پیپلز پارٹی کے عمیر خان محمد حسنی کو تیرہ ہزار ووٹ ملے۔۔۔ حلقہ این اے دو سو ساٹھ کوئٹہ، نوشکی اور چاغی کی نشست پر الیکشن ہوا،،، حلقے میں کل چار لاکھ ساٹھ ہزار دو سو دو رجسٹرڈ ووٹرز تھے۔۔ ضمنی الیکشن کیلئے سیکورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کئے گئے تھے،،، پولیس کے علاوہ ایف سی اور لیویز کے اہلکار وں نے بھی خدمات انجام دیں،،،این اے دو سو ساٹھ کی یہ نشست پشتونخوا ملی عوامی پارٹی کے سینئر رہنما عبدالرحیم مندو خیل کی وفات کے بعد خالی ہوئی تھی۔

Most Popular