لاہور، سروسزہسپتال میں وینٹی لیٹرنہ ملنے پر ڈینگی کی مریضہ دم توڑ گئی، چوبیس گھنٹوں میں مرنے والوں کی تعداد سات ہوگئی

لاہور، سروسزہسپتال میں وینٹی لیٹرنہ ملنے پر ڈینگی کی مریضہ دم توڑ گئی، چوبیس گھنٹوں میں مرنے والوں کی تعداد سات ہوگئی

تمام ترحکومتی اقدامات کے باوجود ڈینگی وائرس پر قابو نہیں پایا جاسکا اورمرض کی شدت بدستور برقرار ہے. رات گئے لاہور میں ڈینگی وائرس میں مبتلا پنتالیس سالہ خاتون خالدہ پروین جاں بحق ہوگئی، ورثا کا کہنا ہے کہ مریضہ کو سروسز ہسپتال میں لایا گیا مگر وینٹی لیٹر نہ ہونے کے باعث وہ دم توڑ گئی، لاہورکے میو ہسپتال میں زیرعلاج دوخواتین سمیت تین افراد چل بسے جبکہ گنگا رام میں بھی ایک خاتون سمیت تین افراد دم توڑ گئےجس کے بعد صوبائی دارالحکومت میں ڈینگی کا شکار بننے والوں کی تعداد دوسوسترہ ہوگئی ہے۔ جاں بحق ہونےوالوں میں سکیم پورہ کارشید،مکھن پورہ کامجید،تاجپورہ کی پچیس سالہ فاطمہ،مزنگ کی ساٹھ سالہ اختر بی بی ، رسول پارک کا پچیس سالہ تنویراور راج گڑھ کا پچاس سالہ حنیف شامل ہیں۔ادھر پنجاب میں ڈینگی کےمتاثرہ مریضوں کی تعداد سولہ ہزارپانچ سوسےتجاوزکرگئی ہےجبکہ لاہورمیں متاثرہ مریضوں کی تعداد چودہ ہزارسےزائدہے۔

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular