شہر قائد میں آج بھی خاتون سمیت مزید تین افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا۔ سہراب گوٹھ میں گزشتہ روز قتل ہونے والے تین نوجوانوں کی نماز جنازہ ادا کردی گئی۔

شہر قائد میں آج بھی خاتون سمیت مزید تین افراد کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا۔ سہراب گوٹھ میں گزشتہ روز قتل ہونے والے تین نوجوانوں کی نماز جنازہ ادا کردی گئی۔

آج علی الصبح کراچی کے شیر شاہ پل کے نزدیک سے دوافراد کی بوری بند لاشیں ملیں جنہیں فائرنگ کرکے قتل کیا گیا تھا۔ دونوں کی شناخت نہیں ہوسکی۔ ابراہیم حیدری کے علاقے علی اکبر شاہ گوٹھ میں اشفاق نامی شخص نے گھریلو جھگڑے کےبعد اپنی اہلیہ عائشہ کو قتل کردیا جبکہ کوسٹ گارڈ چورنگی کے نزدیک تیز رفتار پک اپ کی ٹکر سے سات افراد زخمی ہوگئے۔ادھر سہراب گوٹھ میں گزشتہ روز مسلح تصادم میں مارے جانے والے تین نوجوانوں کی نماز جنازہ سپر ہائی وے پر ادا کی گئی۔اس موقع پرشہر کی سب سے مصروف شاہراہ پر ٹریفک بند ہوگئی اور گاڑیوں کی طویل قطاریں لگ گئیں۔اس موقع پر مشتعل افراد نے قاتلوں کی گرفتاری کے لئے احتجاجی مظاہرہ بھی کیا۔ دوسری جانب کراچی پولیس نے کالا پل پر مقابلے کے بعد چوبیس سالہ علی کو گرفتار کرکے اس کے قبضے سے اسلحہ اور پینتیس موبائل فون بھی برآمد کرلئے جبکہ اس کے تین ساتھی فرار ہوگئے۔

About the author /

Waqt News

Waqt News Web Team

Most Popular