سندھ ہائی کورٹ نے اربوں روپے کی کرپشن میں گرفتار سابق مشیر پٹرولیم کی ضمانت منظور کرتے ہوئے رہائی کا حکم دے دیا

سندھ ہائی کورٹ نے اربوں روپے کی کرپشن میں گرفتار سابق مشیر پٹرولیم کی ضمانت منظور کرتے ہوئے رہائی کا حکم دے دیا

پاکستان پیپلز پارٹی کے سابق مشیر پٹرولیم اور آصف زرداری کے دست راست ڈاکٹر عاصم حسین کے خلاف سندھ ہائیکورٹ میں چار سو اناسی ارب کرپشن کے دو ریفرنسز پر سماعت ہوئی، عدالت نے دونوں مقدمات میں ڈاکٹر عاصم کی ضمانت منظور کرلی، انہیں پچاس لاکھ روپے کے مچلکے جمع کرانے کا حکم دیا گیا ہے، ڈاکٹر عاصم کی ضمانت میڈیکل بنیاد پر منظور کی گئی، چیف جسٹس نے دو ججوں کے اختلافی فیصلے پر معاملہ ریفری جج جسٹس آفتاب گورڑ کو بھجوایا تھا، ڈاکٹر عاصم کی درخواست ضمانت پر فیصلہ ریفری جج نے تحریر کیاڈاکٹر عاصم کے وکیل نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ان کے موکل پر جھوٹے مقدمات بنائے گئے،، عدالت نے انصاف پر مبنی فیصلہ دیا۔پاکستان پیپلز پارٹی کے سابق مشیر پٹرولیم کو چار سو اناسی ارب روپے کرپشن کے دو مختلف کیسز اور اپنے ہسپتال میں دہشتگردوں کا علاج کرنے کے الزام میں حراست میں لیا گیا تھا، وہ طویل مدت سے زیر حراست تھے۔ ڈاکٹر عاصم حسین کے وکیل نے متعدد بار عدالت میں استدعا بھی کی تھی کہ ان کے موکل کی جسمانی حالت ٹھیک نہیں ہے اس لئے ان کو ضمانت پر رہا کیا جائے تاکہ ان کا علاج کروایا جا سکے۔۔۔

Most Popular