کراچی میں بارشوں نے نظام زندگی درہم برہم کر دیا۔

کراچی میں بارشوں نے نظام زندگی درہم برہم کر دیا۔

تہرتی گاڑیاں، پانی کے ریلے، کچرے اور غلاظت کے ڈھیر، یہ صورتحال ہے پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی کی، جہاں دیکھیں پانی ہی پانی، پانی کے ریلے اس قدر شدید کے گاڑیاں بھی تیرتی نظر آئیں، شہر قائد میں برسات نے انتظامی امور کا بھانڈا پھوڑ دیا۔ کراچی میں باران رحمت کوانتظامیہ کی غفلت نے زحمت بنا کر رکھ دیا، بار بار وارننگ اور پتہ ہونے کے باوجود بھی حکومت کی طرف سے صرف تماشہ دیکھنے کا انتظار کیا گیا، میڈیا کے جھنجھوڑنے کے باوجود بھی انتظامیہ کے کانوں پر جوں تک نہ رینگی، بلدیہ ٹاؤن، ملیر، شاہ فیصل کالونی، کورنگی، لانڈھی، گلستان جوہر، سرجانی، اورنگی، گلشن، کھوکھرا پار، شاہ لطیف ٹاؤن لیاقت آباد، صدر، ناظم آباد، گلشن معمار، گلبرگ، ایف بی ایریا، موسی کالونی کے علاقے پانی میں گم ہو گئے، بارش سے گرمی تو بھاگ گئی مگرمسائل کے انبار لگ گئے، کچرے کے ڈھیر سڑنے کی وجہ سے شدید تعفن پھیل رہا ہے جس سے بیماریاں پھیلنے کا خدشہ ہے۔

Most Popular